بھارت: افواج میں مسلم خواتین حجاب کرنے میں آزاد

marhaba نے 'اسلام اور معاصر دنیا' میں ‏دسمبر 27, 2011 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. marhaba

    marhaba ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏فروری 5, 2010
    پیغامات:
    1,667
    بھارتی وزارت دفاع کے تحت سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے بھارتی وزیر دفاع اور آرمی چیف نے کہا کہ بھارتی وزارت دفاع کے مطابق بھارتی آرمی، نیوی، ایئرفورس میں اعلی عہدوں پر مسلمان خواتین کے لئے حجاب میں رہ کر اپنے فرائض انجام دینے کے حوالے سے صدر جمہوریہ پریتھا پاٹل نے تعزیرات ہند کے تحت کام کرنے کی اجازت دی ہے۔ حجاب ایک مذہبی معاملہ ہے۔ بھارتی افواج نے سپریم کورٹ میں جانے والی ایک ایئرفورس کی ملازم عذرا بیگم کی درخواست پر فیصلہ دیا تھا کہ مسلمان خاتون کو حجاب سے نہ روکا جائے۔ بھارت ایک سیکولر ملک ہے لیکن ہر مذہب کے ماننے والوں کے رسم و رواج اور فرائض میں مداخلت کرنا بھارتی جمہوریت کو نقصان دے سکتا ہے۔ بھارتی وزارت دفاع کے تحت مسلمان خواتین کو فوجی قوانین کے تحت اپنے حجاب کو مکمل کرنے کی آزادی ہے۔ انہوں نے کہا کہ خواتین فوجیوں کی بیرکوں میں مردوں کے داخلے پر پابندیاں برقرار ہیں، کوئی سینئر تنہا اپنے آفس میں اپنی ماتحت کو نہیں بلاسکتا، کام کے دوران ٹاپ سیکرٹ موومنٹ میں بھی 4 سے زائد افراد کا ہونا لازمی ہے۔ آرمی چیف کا دعوی ہے کہ بھارتی آرمی میں یورپی ممالک کی طرح فوجی خواتین کے اسکینڈلز نہیں ہیں۔

    اردوٹائمز

    الحمدللہ بہت خوشی کی بات ہے ۔۔۔۔ شاید بعض ساتھیوں کو اس خبر پر یقین نہ آئے ۔۔۔ لیکن یہ حقیقت ہے ۔۔۔۔ امیدکہ جسطرح یہ تبدیلی آئی ہے اسی طرح ہماری سوچ اور رویہ میں بھی تبدیلی آئےگی ان شاءاللہ ۔۔۔
     
  2. محمد زاہد بن فیض

    محمد زاہد بن فیض نوآموز.

    شمولیت:
    ‏جنوری 2, 2010
    پیغامات:
    3,702
    بہت خوب انڈین حکومت کا اچھا اقدام
    انفارمیشن کا شکریہ مرحبا بھائی
    شکریہ فار شیئرنگ
     
  3. ابو۔دجانہ

    ابو۔دجانہ -: معاون :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 19, 2011
    پیغامات:
    21
    بھارت کا یہ اقدام خوش آئیند ہے ۔ ۔ ۔
     
  4. ابومصعب

    ابومصعب -: منفرد :-

    شمولیت:
    ‏اپریل 11, 2009
    پیغامات:
    4,067
    الحمدللہ۔
    بہرحال ہندوستان کے حوالے سے ہو یا ہر وہ جگہ جہاں‌سے کوئی خیر کی خبر ملتی ہے، خوشی ہوتی ہے کہ، امت مسلمہ کو کہیں‌ بہرحال اللہ کی مدد ضرور ملتی ہے۔، خوش آئیند بھی کہہ سکتے ہیں‌کہ، کم از کم ابھی فی الوقت، ہندوستان میں‌مسلمان دعوت دین کے میدان کو اگر بہتر طور پر استعمال کریں‌تب ، اسلام کی اصل پہچان اور روح دوسرے مذاہب تک پہنچائی جاسکتی ہے، اور اس میں‌کوئی رکاوٹ نہیںِ
     
  5. منصف

    منصف -: منفرد :-

    شمولیت:
    ‏جولائی 10, 2008
    پیغامات:
    1,920
    بھارت کا اقدام اچھا ہے اور ان ممالک کے قابلِ تقلید ہے جنہوں نے حجاب کے مسئلے کو اپنی انا کا مسئلہ بنایا ہؤا ہے ۔۔۔
    تاہم ایک بات کی سمجھ نہیں آتی کہ بھارتی مسلم خواتین ، بھارتی افواج میں آخر بھرتی ہی کیوں ہوئی ۔۔۔۔؟؟
    کس مقصد کے تحت بھرتی ہوئی ۔۔۔
    دنیا کی خبیث ترین افواج میں سے ایک ہے بھارتی افواج ۔۔۔کشمیر میں انسانیت سوز اور مسلم کش مظالم سے اس کا دامن داغدار ہے ۔۔
    یہ تو دنیا بھی مانتی ہے ۔۔۔۔
    پھر آخر کیا وجہ ہوئی کہ اس خباثت کا حصہ بننے کے لیے ۔۔۔۔۔۔ایسی بھی کیا مجبوری ہوئی کہ طاغوتی شیطانی افواج میں بھرتی ہونے کی ۔۔۔؟
     
  6. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,485
    مدھيہ پرديش ميں گئو ذبيحہ پر پابندى كى خبر كسى نے پوسٹ نہيں كى ۔ ہر ایکسلنسی پرتيبھا پاٹل كى ڈجيٹل آؤٹ ريچ ٹيم كے ڈر سے؟ واہ سيكيولر انڈيا تیرے فضائل ۔
    Madhya Pradesh cow slaughter ban Act gets Presidential nod
    The Hindu : States / Other States : Madhya Pradesh cow slaughter ban Act gets Presidential nod

    Cow slaughter to carry 7-year jail term in Madhya Pradesh - Times Of India
     
  7. ابن قاسم

    ابن قاسم محسن

    شمولیت:
    ‏اگست 8, 2011
    پیغامات:
    1,717
    ملک میں گوشت نوش کرنے والوں کی شرح زیادہ ہے اور چار پایوں کی اتنی پیداوار ہے کہ اگر وہ کَٹنا بند ہوجائیں تو راستوں پر ہر جگہ جانور ہی نظر آئیں گے، اس سے انتظامیہ کے لئے مسئلہ ہوگا۔
     
  8. ندوی

    ندوی ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏نومبر 15, 2011
    پیغامات:
    49
    اگرمرحبابھائی اس خبر کا ذریعہ بتادیں تومہربانی ہوگی کیونکہ مجھے بھی یہ خبرنہیں معلوم ہے
    دوسری بات یہ ہے کہ گائے کے ذبیحہ پر پابندی خالصتاسیاسی معاملہ ہے۔ کرناٹک میں پہلی مرتبہ بی جے پی حکومت برسراقتدار آئی تواس نے ہندوئوں کے جذبات کااستحصال کرنے کیلئے گائے کے گوشت پر پابندی عائد کرنی چاہی تواولااس کو گورنر ہنس راج بھاردواج نے لٹکایا اورپھر وہ کابینہ کی تجویز اب صدرجمہوریہ ہند کے پاس تقریبادوسالوں سے پڑی ہے۔
     
  9. ابن قاسم

    ابن قاسم محسن

    شمولیت:
    ‏اگست 8, 2011
    پیغامات:
    1,717
    یہ خبر اردو خبریں سے لی گئی ہے۔ نام نہاد اسلامی ملک میں‌ بھی مسلمہ کو شاید ہی پردے کی پابندی کرنی پڑھتی ہو
    ملک میں مسلمانوں کے بنیادی حقوق محفوظ ہیں الحمدللہ
     
  10. marhaba

    marhaba ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏فروری 5, 2010
    پیغامات:
    1,667
    الحمد للہ
     
Loading...

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں