جنگلی امریکی فوجی کی فائرنگ 16 افغان قتل کر ڈالے

عائشہ نے 'خبریں' میں ‏مارچ 11, 2012 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,487
    ابھی ابھى اس انتہائى دل خراش خبر پر نظر پڑی کہ قندھار میں جنگلی امریکی فوجی نے فائرنگ کر کے 9 معصوم بچوں سميت 16 بے گناہ افغان ديہاتيوں كو قتل کر ڈالا ، انا للہ وانا اليہ راجعون ۔ يہ خبيث انسان فوجی اڈے سے نكل كر عام گھروں ميں گھس كر اس بہیمانہ قتل عام كا مرتكب ہواـ ايسوسى ايٹڈ پريس كى خبر ميں اس كو ذہنى تناؤ كا شكار بتا كر جرم كى سنگينى كو كم كرنے كى كوشش كى جا رہی ہے۔
    گنوار امريكيوں كى جانب سے قرآن مجيد كى بے حرمتى پر افغانستان ميں حالات پہلے ہی شديد خراب ہيں ۔ مزيد كسر اس واقعے سے پورى ہو گئی۔ نجانے يہ امريكى كب تك جنگلى بھينسوں كى مانند ملكوں ملكوں ڈكراتے پھريں گے۔
    US soldier kills 16 Afghans, deepening crisis - Yahoo! News
     
  2. اعجاز علی شاہ

    اعجاز علی شاہ -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏اگست 10, 2007
    پیغامات:
    10,324
    ابھی پھر کیاہوا گا امریکہ میں اوبامہ صاحب گہرے دکھ کا اظہار کرکے معافی مانگ لیں گے (اور فورا معاف بھی ہوجائیں گے)
    افغانستان میں امریکی جنرل معافی مانگ لیں گے (اپنے اور کرائے کے فوجی ان کو معاف کردیں گے)
    یہاں پر ہمارے فواد بھائی ان کی معافیوں کا اعلان کرلیں گے
    بس معاملہ ختم ہوجائے گا
     
  3. اعجاز علی شاہ

    اعجاز علی شاہ -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏اگست 10, 2007
    پیغامات:
    10,324
    وہی ہوا
    President Obama issued condolences Sunday, saying he is "deeply saddened" by an alleged shooting of civilians by a US service member in Afghanistan
    خبروں میں یہ شہ سرخیاں
    گہرے دکھ کا اظہار کرکے گہری نیند سوجائیں گے۔ صبح اٹھ کر پتہ تک نہیں ہوگا کہ کل کن بے گناہوں کا خون بہایا گیاتھا۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  4. جاسم منیر

    جاسم منیر Web Master

    شمولیت:
    ‏ستمبر 17, 2009
    پیغامات:
    4,636
    انا للہ وانا الیہ راجعون
    وقفے وقفے سے یہ درندے اپنی سفاکی دکھاتے رہتے ہیں۔ پھر ایک بیان آ جاتا ہے کہ "جان بوجھ "‌کر نہیں‌کیا گیا، "غلطی " ہو گئی۔ میں تو کہتا ہوں کہ ایسے درندوں کو دیکھ کر لوگوں سے بھی کچھ "غلطی" ہونی چاہیے۔۔۔ سبق آئے تاکہ انہیں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  5. ام ثوبان

    ام ثوبان رحمہا اللہ

    شمولیت:
    ‏فروری 14, 2012
    پیغامات:
    6,690
    انا للہ وانا الیہ راجعون
    صرف مسلمانوں کاخون اتنا سستا ہے روزانہ مسلمان ملکوں میں کتنے لوگ مار دیے جاتے ہیں ۔ہم سب مسلمان ایک دعفہ باقی خبروں کی طرح پڑھ کر بھول جاتے ہیں ۔ان کے ملک میں دس سال پہلے کوئ حادثہ ہوا ہو اس کو بھی نہیں بھولتے ۔وہ تو سب کو بھی مار دیں پھر معافی مانگ لیں گے بات ختم۔۔۔یا دھمکی دیں گے آپ کی امداد بند پھر الٹاہمیں معافیاں مانگنی پڑھتی ہیں ۔دعا کریں اللہ ہمیں پہلے جیسے مسلمان بنا دے اتنی محبت ایک دوسرے کے لیے ہمارے دلوں میں ڈال دے جیسے ایک حصے میں تکلیف ہو ہمارے پورے جسم میں تکلیف ہوتی ہے۔۔۔
     
  6. حرب

    حرب -: مشاق :-

    شمولیت:
    ‏جولائی 14, 2009
    پیغامات:
    1,082
    جن افراد کو قتل کیا گیا ہے وہ شہید ہیں؟؟؟۔۔۔
     
  7. الطائر

    الطائر رکن اردو مجلس

    شمولیت:
    ‏جنوری 27, 2012
    پیغامات:
    273
    انا لللہ و انا الیہ راجعون​


    اللہ تمام بے گناہ افغان مقتولین کی موت کو شہادت کا درجہ عطا فرماتے ہوئے انھیں جنت الفردوس سے سرفراز فرمائے اور تمام مجروحین کو شفائے کاملہ جمیلہ عطا فرماتے ہوئے ان کے حالات پر رحم فرماتے ہوئے بہتری کی صورت پیدا کرے اور پسماندگان کو صبر، حوصلہ اور جزائے کثیر عطا فرمائے آمین۔


    حسبِ معمول، افغانستان کے جنوبی صوبہ قندھار کے ضلع پنجوائی کے دیہات بالندئی اور الکوزئی میں بے درجنوں بے گناہ اور معصوم، نہتے بچوں، نوجوانوں، عورتوں اور عمر رسیدہ افراد کے سفاکانہ قتلِ عام پر، امریکی صدر، افغانستان میں متعین صلیبی جارح افواج کے کمانڈر جنل ایلن اور ایساف کے ترجمان جنرل کارسٹن رسمی تعزیت اور فوری کاروائی کے بیانات جاری کر رہے ہیں۔ تو دوسری طرف مغربی ذرائع ابلاغ اس بیمانہ قتلِ عام کی واردات کو ''ایک افسوسناک واقعہ'' اور ایک فردِ واحد کی ''کاروائی'' کی گھٹیا اور زرد صحافیانہ اصطلاحات استعمال کرتے اور اس کی دماغی حالت مشکوکت بتاتے ہوئے معاملے کی مجرمانہ سنگینی کو گھٹانے کی کوشش کر رہے ہیں۔ حسبِ معمول، ایک بار پھر بد نیتی، مسلم کُشی اور اسلام دشمنی کے لئے دانستہ جھوٹ سے کام لیا جا رہا۔

    اس افسوس ناک واقعے، یا بہیمانہ اجتماعی قتلِ عام کے چند گھنٹوں بعد ہی، اس قتلِ عام سے متعلق بولے گئے سفید جھوٹ کی کچھ شہادتیں اور چند شبہات منظرِ عام پر آ چکے ہیں۔ پہلی شہادت تو یہ ہے کہ منظر عام پر آنے والی تصاویر میں جلے ہوئے انسانی اجسام یہ ظاہر کر رہے ہیں کہ اجتماعی قتلِ عام کی سفاکانہ واردات میں آگ لگانے اور جلا اور جھلسا دینے والے مہلک اسلحہ جات کا استعمال کیا گیا ہے۔ دوسری شہادت طالبان کا ابتدائی بیان ہے جس کے مطابق ہلاک ہونے والے افراد کی تعداد 16 نہیں بلکہ بد قسمتی سے 50 سے زائد متوقع ہے۔ خدا نخواستہ، طالبان جتنے بھی بُرے متصور کئے جاتے ہوں وہ جھوٹ نہیں بولتے اور نہ ہی اعداد و شمار کو مغربی کذابین کی طرح بڑھا چڑھا کر پیش کرتے ہیں۔ کیونکہ ان کا اسلامی عقیدہ انھیں کسی بھی معاملے میں حد سے گزرنے اور غلو سے منع کرتا ہے۔

    اب رہی بات شبہات کی۔ جلد ہی ، یہ بات واضح ہو جائے گی کہ اس اجتماعی قتلِ عام میں نہ صرف ایک سے زیادہ مجرم شاملِ ارتکاب تھے بلکہ انھیں افغان نیشنل آرمی کے شمالی اتحاد کے افراد کی عملی اعانت حاصل تھی۔ دوسرا سب سے بڑا شبہ یہ ہے کہ امریکی، ناٹو اور دیگر مغربی افواج کے اڈوں کی سیکیوریٹی اتنی سخت ہوتی ہے کہ اڈے کے اندر جانا یا باہر آنا سخت حفاظی قوانین و ضوابط کا پابند ہوتا ہے۔ یہ بات قابلِ یقین نہیں کہ ایک امریکی فوجی آدھی رات کے وقت بغیر کسی معقول وجہ اور اجازت کے اڈے سے باہر چلا جائے اور واپس بھی آ جائے۔ نہیں ایسا ہر گز نہیں ہے۔ آنے والا وقت جلد ہی وہ شادتیں بے نقاب کر دے گا کہ اس بہیمانہ جرم میں ایک سے زیادہ افراد کا حصہ تھا جنھوں نے ایک سوجھی سمجھی حکمتِ عملی کے تحت قرآن سوزی کے باعث حالیہ دنوں میں عوامی ردِ عمل کے نتیجے میں ہلاک ہونے والے کئی امریکی اور گزشتہ چند روز میں ہلاک ہونے والے 6 برطانوی فوجیوں کے انتقام میں بے گناہ افغان شہریوں کا عمداًقتلِ عام کیا۔ اس واردات میں افغان نیشنل آرمی کے شمالی اتحاد عناصر کا تعلق تو سب پر واضح ہی ہے۔

    کس نے کیا مہمیز ہوا کو؟
    افغان عوام کے اشتعال کی ہوا کو
    افغان عوام کے جذبہ انتقام کی ہوا کو
    افغان عوام کے جذبہ جہاد کی ہوا کو

    شائد اُن کا آنچل ہو گا۔ ۔ ۔
    کس کاآنچل؟
    افغانستان کی بیٹی ملالئی کا آنچل
    اُس کا آنچل صرف آنچل ہی نہیں
    اُس کا آنچل پرچمِ حُریت و شجاعت ہے
    وہ آنچل جو ہر غیور و شجاع افغان اپنے سر پر پگڑی، دستار کی صورت اوڑھتا اور موت کے کفن کی طرح باندھتا ہے


    درجِ ذیل روابط میں موجود تصاویر اور بیانات کسی اور حقیقت کی نشاندہی کر رہے ہیں نہ کہ وہ جو کہا اور بتایا جا رہا ہے۔

    گرینیچ ٹائمز

    ابتدائی طالبان بیان
     
  8. نعیم یونس

    نعیم یونس -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 24, 2011
    پیغامات:
    7,922
    انا للہ وانا الیہ راجعون
     
  9. ابومصعب

    ابومصعب -: منفرد :-

    شمولیت:
    ‏اپریل 11, 2009
    پیغامات:
    4,067
    انا للہ وانا الیہ راجعون

    میں‌یہ سوچ رہا ہوں کہ اگر یہ کسی دوسری کمیونیٹی کے فرد سے امریکہ میں‌یہ معاملہ پیش آتا یا امریکہ کے باہر کسی امریکی کو ایسے قتل کردیا جاتا تو معاملہ کیا ہوتا۔
    سفاری تعلقات بند کردئے جاتے۔
    تنبیہ کیا جاتی۔
    معافی مانگنی پڑتی۔
    یا پھر اس سے بڑھکر یہ کہ، تحدیدات کا سامنا ہوتا، اور اس سے بھی آگے بڑھ جائیں‌تب، اس ملک کے خلاف ایسے ایسے پروپیگنڈی کئے جاتے کہ بالآخر ساری دنیا یہ ماننے پر مجبور ہوجاتی کہ ہاں‌یہ ملک اور اسکے لوگ جنگلی،اور دہشت گرد ہیں۔۔۔!
    لیکن شیطان صفت امریکیز یہ کام کریں‌تب ، بڑی مشکل سے ایک عدد ایسی معافی مانگ لی جائیگی، جسے معاف کردینا بھی معافی مانگنے والے کی طرف سے مشروط کردیا گیا ہو۔
    بہرحال یہ دنیا کے پورز اور اسکے بے اختیارات کی ایک مثال ہے، ورنہ اس دودن کی دنیا میں ایسے واقعات، شیطنت اوردرندگی کی مثال ہے، اور ایسے خداووں کو دی گئی چھوٹ کے چند مظاہر ہے اسکے سوا کچھ نہیں۔۔۔لیکن دوسری طرف امت مسلمہ ایسے مواقعہ پر اپنے اپنے موازنہ ضرور کرلے یہ مطلوب ہوسکتا ہے کہ اسکی اپنی حیثیت دنیا میں‌جو ہے کیا اس پر وہ کامیابی کے ساتھ گامزن ہے، اور نہیں‌تب اسکو اللہ سے رجوع ہوکر پکے سچے مسلمان بننے کی کوشش کرلینی چاہیئے۔۔۔!!جزااور سزا کا حقیقی مالک تو بس وہی ہے۔۔۔! اللہ
     
  10. Ishauq

    Ishauq -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏فروری 2, 2012
    پیغامات:
    9,612
    انا للہ وانا اليہ راجعون
     
  11. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,487
    افغان پارليمنٹ نے مطالبہ كيا ہے كہ امريكى فوجى قاتل كا افغانستان ميں اوپن ٹرائل كيا جائے۔
    عينى شاہدين كے بيانات :
    يہ امريكا كا اصل چہرہ ہے ! جنونى قاتل ۔
     
  12. حرب

    حرب -: مشاق :-

    شمولیت:
    ‏جولائی 14, 2009
    پیغامات:
    1,082
    سوال یہ ہے کے اس واردات کے محرکات کیا ہیں۔۔۔ یا کیا ہوسکتے ہیں؟؟؟۔۔۔ بربریت اور سفاک چنگیزیت کی لاتعداد مثالیں ماضی سے لیکر اب تک ہمارے سامنے ہیں پچھلی تین دھائیوں سے مسلمانوں کے ساتھ ہو کیا رہا ہے یہ کوئی ڈھکی چھپی بات نہیں۔۔۔ پچھلے تین دنوں سے غزہ پر اسرائیلی فضائیہ کے حملے کیا معنی رکھتے ہیں؟؟؟۔۔۔ کہیں شام کے شہر حمص میں کوئی بڑی سازش تو ہونے نہیں جارہیا؟؟؟۔۔۔ جس وجہ سے عرب اور ایشیائی ممالک کا دھان ادھر لگا کر مصروف کردیا جائے؟؟؟۔۔۔ کیونکہ اگر حمص فتح ہوگیا تو پھر بحرین اور کویت کا جو حال ہونا ہے اس کے لئے پہلے سے ذہنی طور پر تیار رہیں۔۔۔ کیونکہ تیسرا نمبر سب جانتے ہیں کس کا ہوگا۔۔۔ اور پھر وہ حدیث دسترخوان پر لپکنے والی بھوکوں کی طرح۔۔۔
     
  13. Fawad

    Fawad -: ماہر :-

    شمولیت:
    ‏دسمبر 19, 2007
    پیغامات:
    954
    فواد – ڈيجيٹل آؤٹ ريچ ٹيم – يو ايس اسٹيٹ ڈيپارٹمينٹ

    افغانستان ميں معصوم شہريوں کی ہلاکت پر شدید ردعمل قابل فہم ہے۔ ہمارے ليے بھی يہ واقعہ اتنا ہی سنگين اور دل دہلا دينے والا ہے جتنا آپ سب کے ليے ہے۔ صدر اوبامہ کی جانب سے فوری مذمتی بيان اور اس عزم کا مصمم ارادہ کہ اس جرم کا ارتکاب کرنے والے کو انصاف کے کٹہرے ميں لايا جاۓ گا، اس واقعے کے حوالے سے ہماری پوزيشن اور نقطہ نظر کو واضح کرتا ہے۔

    ليکن ميں آپ کی توجہ اس بات کی جانب دلوانا چاہتا ہوں کہ امريکی حکومت اور اسٹيٹ ڈيپارٹمنٹ کے ترجمان کی حيثيت سے ميں نہ صرف آپ کے سوالات کے جواب دے رہا ہوں بلکہ حقائق بھی تسليم کر رہا ہوں۔ شفاف عمل اور اپنے اقدامات کے ليے احتساب کا سامنا ايک جمہوری نظام کا ہی خاصہ ہے۔ کيا طالبان اور القائدہ کے دہشت گردوں کے لیے بھی يہ دعوی کيا جا سکتا ہے؟

    ميں يہ بھی واضح کر دينا چاہتا ہوں کہ اس واقعے ميں صرف ايک امريکی فوجی ملوث تھا جو کہ اس وقت زير حراست ہے اور تمام تر حقائق کی تفتيش کے بعد اسے قانون کا سامنا کرنا پڑے گا۔ کچھ رپورٹس ميں يہ تاثر دينے کی کوشش کی گئ ہے کہ فوجيوں کے ايک گروپ نے مل کر باقاعدہ منصوبہ بندی کے ساتھ يہ کاروائ کی ہے، جو کہ سراسر غلط ہے۔

    آئ – ايس – اے – ايف کے کمانڈر جرنل جان آر ايلن نے يہ بيان جاری کيا ہے۔

    "ميں قندھار صوبے ميں فائرنگ کے واقعے کے حوالے سے غمگين اور صدمے کی حالت ميں ہوں۔ ميں ہلاک شدگان اور ان کے اہل خانہ سے دلی افسوس اور تعزيت کرتا ہوں۔ ميں اقغانستان کے غيور عوام سے ايک جامع اور بروقت تفتيش کرنے کا وعدہ کرتا ہوں۔ جس امريکی فوجی پر اس واقعے کے حوالے سے الزام لگا ہے، ہم اسے بدستور زير حراست رکھيں گے۔ اور تمام تر حقائق کی پڑتال تک ہم مقامی افغان اتھارٹی سے مکمل تعاون جاری رکھيں گے۔ يہ انتہائ افسوس ناک واقعہ اتحادی افواج اور آئ – ايس – اے – ايف کی قدروں اور افغان عوام کے ليے موجود ہمارے احترام کی ترجمانی نہيں کرتا۔ جس کسی نے بھی جرم کا ارتکاب کيا ہے اسے کيفر کردار تک پہنچانے کے ليے ميں مکمل طور پر پرعزم ہوں۔"

    ميں نے بارہا فورمز پر يہ واضح کيا ہے کہ سياسی، سفارتی اور فوجی لحاظ سے بے گناہ شہريوں کی ہلاکت سے امريکہ کو کوئ فائدہ حاصل نہيں ہوتا۔ اس کے برعکس اس طرح کے واقعات سے ہمارے اہداف اور مقاصد کو نقصان پہنچتا ہے اور بےگناہ شہريوں کی ہلاکت سےدہشت گردوں کو جذبات بھڑکانے اور واقعے کو "استعمال" کرنے کا موقع فراہم ہو جاتا ہے۔

    فواد – ڈيجيٹل آؤٹ ريچ ٹيم – يو ايس اسٹيٹ ڈيپارٹمينٹ
    digitaloutreach@state.gov
    http://www.state.gov
    http://www.facebook.com/pages/USUrduDigitalOutreach/122365134490320?v=wall
     
  14. حرب

    حرب -: مشاق :-

    شمولیت:
    ‏جولائی 14, 2009
    پیغامات:
    1,082
    پرانی کہاوت ہے قاضی کے گھر کے چوہے بھی سیانے ہوتے ہیں۔۔۔ دراصل اس ایکشن کا ری ایکشن دیکھنا ہے۔۔۔ تاکہ 2012 کے الیکشن میں فنڈنگ ہو۔۔۔ اور ظاہر ہے ری ایکشن تو ہوگا۔۔۔ مگر پیچیدہ سوال یہ ہے کے اس بار ٹوپی کس پر رکھی جائے گی؟؟؟۔۔۔ پاکستان پر یا سعودی عرب پر۔۔۔ یعنی ایشیاء میں طالبان اور عرب میں القائدہ۔۔۔
     
  15. جاسم منیر

    جاسم منیر Web Master

    شمولیت:
    ‏ستمبر 17, 2009
    پیغامات:
    4,636
    ہاں ، جیسے ایک درندہ ریمنڈ ڈیوس پاکستان کے شہریوں کوقتل کر کے چلا گیا اور کیا خوب مقدمہ چلا اس پر تو۔ کچھ اسی قسم کے مقدمہ اس درندے پر بھی چلے گا۔ یہی کہنا چاہ رہے ہو نا مسٹر؟؟؟
     
  16. ابوعمر

    ابوعمر محسن

    شمولیت:
    ‏اکتوبر، 23, 2007
    پیغامات:
    171

    اصلی دہشتگرد کون ہے یہ دنیا جان چکی ہے ۔ عراق ہو یا افغانستان ، معصوم عورتوں اور بچوں کا قتل عام کرنا ، ان کی لاشوں کو مسخ کرنا ، ان کی لاشوں پر پیشاب کرنا اور انھیں جلا دینا، چھوٹی چھوٹی معصوم بچیوں کو اپنی اجتماعی درندگی اور ہوِس کا نشانہ بنانا، مسلمانوں کی مقدس کتاب کو جلانا اور اس کے اوپر پیشاب کرنا ۔۔۔
    میں کہتا ہوں کہ اس امریکی خبیث فوج کو دہشتگرد کہنا بھی دہشتگردوں کی توہین ہے۔ یہ جنونی اور وحشی درندے تو انسان کہلوانے کے بھی قابل نہیں۔۔۔
     
  17. ابومصعب

    ابومصعب -: منفرد :-

    شمولیت:
    ‏اپریل 11, 2009
    پیغامات:
    4,067
    اچھاااااااااااااااااا لیکن مجھے اس آئی ڈی پر ہی ڈاوٹ ہے، نہیں‌لگتا کہ کوئی پاکستانی انڈین ہو اس آئی ڈی (فواد) کے ساتھ۔۔ بلکہ ، کوئی ایسا بندہ ہو، جو کہ ایسا اردو اسپیکنگ ہے، جنکی رگ رگ میں امریکی لہو دوڑ رہا ہو۔ واٹ اے گریٹ (مزمت بھرا) پوسٹ کیا ہے۔۔۔!
     
  18. منہج سلف

    منہج سلف --- V . I . P ---

    شمولیت:
    ‏اگست 9, 2007
    پیغامات:
    5,047
    السلام علیکم!
    کچھ عرصے کے بعد اس فورم پر آيا ہوں، بہت مصروف ہوں آج کل۔
    خیر اس درندگی کا جواب ہے :فری میسنری۔
    یہ لوگ فری میسن ہیں اور فری میسنز کے لیے سب کچھ جائز ہے۔
    ان کو مکمل طور پر جاننے کے لیے آپ کو فری مسنری کو پوری طرح سمجھنا ہوگا، تب جاکر آپ کو بات سمجھ میں آئے گی اور پھر آپ کو ان کی کسی بھی حرکت پر حیرت نہیں ہوگی۔ ان شاءاللہ
    والسلام علیکم
     
  19. منہج سلف

    منہج سلف --- V . I . P ---

    شمولیت:
    ‏اگست 9, 2007
    پیغامات:
    5,047
  20. اعجاز علی شاہ

    اعجاز علی شاہ -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏اگست 10, 2007
    پیغامات:
    10,324
    یہ تو ایک امریکی کی حرکت ہے جو میڈیا پر آئی۔
    ورنہ کون نہیں جانتا کہ خطرناک قسم کے اسلحہ سے لیس ائیر کرافٹ کے ذریعے جو بمباریاں کی جاتی ہیں ان سے خاندانوں اور نسلوں کو ختم کیا گیا۔
    بتائیے فرق کیا ہے؟
    یہاں پر ایک فوجی نے یہ کام کیا اور وہاں پر سب نے مل کر کام کیا!
     
Loading...

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں