آمین کہنے والے کو اللہ تعالیٰ پسند فرماتے ہیں

نعیم یونس نے 'نقطۂ نظر' میں ‏ستمبر 7, 2012 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. نعیم یونس

    نعیم یونس -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 24, 2011
    پیغامات:
    7,922
    اللہ تعالی کے پسندیدہ لوگ



    (۳۱)… آمین کہنے والے کو اللہ تعالیٰ پسند فرماتے ہیں:
    [FONT="Al_Mushaf"]قَالَ رَسُوْلُ اللّٰہِ: (( إِذَا صَلَّیْتُمْ فَأَقِیْمُوْا صَفُوْفَکُمْ، ثُمَّ لِیَؤُمَّکُمْ أَحَدُکُمْ، فَإِذَا کَبَّرَ فَکَبِّرُوْا، وَإِذَا قَرَأَ {غَیْرِ الْمَغْضُوْبِ عَلَیْہِمْ وَلَا الضَّآلِّیْنَ} فَقُوْلُوْا: آمِیْنَ یُحِبُّکُمُ اللّٰہُ۔ ))
    سورۃ الفاتحۃ، الآیۃ: ۷۔ صحیح سنن أبي داؤد، رقم: ۸۵۸۔[/FONT]

    ’’سیّدنا ابوموسیٰ اشعری رضی اللہ عنہ بیان کرتے ہیں کہ: رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسل نے فرمایا: جب تم لوگ نماز ادا کرنے لگو تو اپنی صفیں سیدھی، درست کرلیا کرو۔ پھر تم میں سے کوئی شخص امامت کروائے۔ جب وہ اللہ اکبر کہہ لے تو پھر تم اللہ اکبر کہو اور جب وہ {[FONT="Al_Mushaf"]غَیْرِ الْمَغْضُوْبِ عَلَیْہِمْ وَلَا الضَّآلِّیْنَ[/FONT]} پڑھ لے تو تم کہو ’’[FONT="Al_Mushaf"]آمین‘‘[/FONT]اللہ تعالیٰ تم سے محبت کرنے لگے گا۔‘‘
    [FONT="Al_Mushaf"]’’آمین‘‘…[/FONT] کا معنی ہوتا ہے: اے اللہ! تو ہماری یہ دعا قبول کرلے۔ ایک دوسرا معنی بیان کرتے ہوئے کہا گیا ہے کہ: اس کا مطلب ہوتا ہے: ایسا ہی ہو۔ سیّدنا ابن عباس رضی اللہ عنہ بیان کرتے ہیں کہ: میں نے رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسل سے دریافت کیا: اے اللہ کے رسول! آمین کا کیا معنی ہے؟ فرمایا: اس کا معنی ہے:[FONT="Al_Mushaf"] رَبِّ افْعَلْ‘‘[/FONT]اے اللہ! ایسا ہی کردے۔
    جناب مقاتل رحمہ اللہ کہتے ہیں: آمین… دعا کی قوت اور برکت کی طلب ہے۔ امام ترمذی رحمہ اللہ فرماتے ہیں: اس کا معنی ہے کہ: اے اللہ! ہماری امید کو ناکام نہ کردینا۔ آمین… کے لفظ کی ادائیگی میں دو لغات ہیں: فاعیل کے وزن پر مد سے پڑھنا، جیسے: یاسین اور دوسرا ’’یمین‘‘ کے وزن پر قصر سے پڑھنا۔ دونوں میں سے مد کے ساتھ آمین کہنا زیادہ فصیح اور مشہور ہے۔ دونوں لہجوں میں حرف ’’م‘‘ خفیف ہوگا۔ (شد کے بغیر)
    ہر قاری کے لیے آمین کہنا مستحب ہے، چاہے وہ نماز میں ولا الضالین پڑھ رہا ہو چاہے نماز سے باہر۔ نماز میں امام اور مامومین سب کے لیے آمین کہنا مستحب ہے۔ جہری نماز میں امام اور مقتدی سب لوگ آمین اونچی آواز سے کہیں۔ یہی صحیح ترین مسلک ہے۔ چاہے جماعت میں لوگ تھوڑے ہوں یا زیادہ، حکم ایک جیسا ہے۔
    مستحب یہ ہے کہ مقتدی کی آمین امام کی آمین کے ساتھ مل کر ہو۔ نہ اس سے پہلے ہو اور نہ اُس کے بعد۔ نماز میں اس کے علاوہ کوئی اور مقام نہیں ہے کہ جس میں مستحب ہو کہ اس میں مقتدی کی بات (آواز) امام کی آواز کے ساتھ ملی ہوئی ہو سوائے آمین کے۔ باقی تمام الفاظ مقتدی کے امام کے الفاظ سے بعد ادا ہونے چاہئیں۔

    [FONT="Al_Mushaf"]الاذکار للنووی: باب ما یقولہ اذا دخل فی الصلوٰۃ…[/FONT]
    سیّدنا وائل بن حجررضی اللہ عنہ بیان کرتے ہیں کہ: رسول اللہa جب نماز میں [FONT="Al_Mushaf"]’وَلَا الضَّالِّیْنَ‘‘[/FONT] پڑھ لیتے تو کہتے: آمین اور اس کے ساتھ اپنی آواز کو بلند کرتے۔‘‘
    [FONT="Al_Mushaf"]سنن ابی داود / کتاب الصلوٰۃ / باب التأمین وراء الامام / حدیث : [/FONT]۹۳۲
     
  2. نعیم یونس

    نعیم یونس -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 24, 2011
    پیغامات:
    7,922
    اور نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم نے تمام اہل ایمان کو حکم فرمایا ہے کہ جس طرح امام آمین کہتا ہے اسی طرح وہ بھی آمین کہا کریں۔ چنانچہ سیّدنا ابوہریرہ رضی اللہ عنہ بیان کرتے ہیں کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا:
    [font="al_mushaf"](( إِذَا أَمَّنَ الْاِمَامُ فَأَمِّنُوْا، فَإِنَّہُ مَنْ وَّافَقَ تَأْمِیْنُہُ تَأْمِیْنَ الْمَلَائِکَۃِ، غُفِرَ لَہُ مَا تَقَدَّمَ مِنْ ذَنْبِہ۔وَقَالَ: إِذَا قَالَ أَحَدُکُمْ فِي الصَّلَاۃِ: آمِیْنَ، وَقَالَتِ الْمَلَائِکَۃُ فِي السَّمَآئِ: آمِیْنَ، فَوَافَقَتْ إِحْدَاھُمَا الْأُخْرٰی، غُفِرَ لَہُ مَا تَقَدَّمَ مِنْ ذَنْبِہ۔ ))
    أخرجہ البخاري في کتاب الأذان، باب: جہر الإمام بالتأمین، رقم: ۷۸۰۔صحیح الجامع الصغیر، رقم: ۷۰۴۔[/font]

    ’’جب امام آمین کہے تو تم بھی آمین کہو۔ اس لیے کہ بلاشبہ جس کی آمین فرشتوں کی آمـین سے مل گئی (موافق ہوگئی) اس کے پچھلے سارے (صغیرہ) گناہ معاف کردیے جائیں گے۔‘‘ اور آپ صلی اللہ علیہ وسلم کا یہ بھی ارشاد گرامی ہے: جب تم میں سے کوئی شخص نماز میں آمین کہتا ہے اور فرشتے بھی آسمان میں آمین کہتے ہیں اور ان میں سے ایک کی آمین دوسرے سے موافق ہوجاتی ہے تو اس (نمازی) کے پچھلے تمام (صغیرہ) گناہ معاف کردیے جاتے ہیں۔‘‘
    آمین کہنے پر یہ بہت بڑی ترغیب ہے اور اس کے بہت بڑے اجر و فضل کا بیان۔ پھر یہ کہ کلمہ آمین ایک نہایت آسان سا لفظ ہے کہ جس کی ادائیگی میں کسی قسم کا تکلف نہیں کرنا پڑتا مگر اس پر ربّ کریم کی مغفرت دیکھیے کیسے مترتب ہوتی ہے۔
    رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کے صحابہ بلند اواز سے آمین کہا کرتے تھے کہ جس سے مسجد گونج جاتی۔ امام عطاء رحمہ اللہ فرماتے ہیں:

    [font="al_mushaf"](( آمِیْن دُعَائٌ۔ أَمَّنَ ابْنُ الزُّبَیْرِ وَمَنْ وَّرَائَ ہُ، حَتّٰی إِنَّ لِلْمَسْجِدِ لَلَجَّۃً۔ ))
    أخرجہ البخاري في کتاب الأذان، باب: جہر الإمام بالتأمین، تعلیقًا۔[/font]

    ’’آمین ایک دعا ہے سیّدنا عبد اللہ بن زبیررضی اللہ عنھا بھی آمین کہتے اور آپ کے پیچھے نماز پڑھنے والے تمام نمازی بھی۔ سب اتنی بلند آواز سے آمین کہتے کہ مسجد میں ایک گونج پیدا ہوجاتی۔‘‘
    سیّدنا ابوہریرہ رضی اللہ عنہ امام کو آواز دے کر کہتے: دیکھنا کہیں مجھ سے آمین رہ نہ جائے۔ (یعنی کچھ سکتہ کرنا کہ میں بھی تمہاری آمین کے ساتھ آمین کہہ سکوں) جناب نافع رحمہ اللہ بیان کرتے ہیں کہ: سیّدنا عبد اللہ بن عمررضی اللہ عنھا کبھی بھی آمین کو چھوڑتے نہیں تھے بلکہ آپ اپنے شاگردوں کو آمین کہنے پر تیار کرتے۔ میں نے اُن سے اس مسئلہ میں بھی بھلائی ہی سنی ہے۔ یعنی آپ کبھی بھی سورۃ الفاتحہ کے بعد آمین کہنا چھوڑتے نہیں تھے۔

    [font="al_mushaf"]قَالَ رَسُوْلُ اللّٰہِ: (( مَا حَسَدَتْکُمُ الْیَھُوْدُ عَلیٰ شَيْئٍ، مَا حَسَدَتْکُمْ عَلیٰ السِّلَامِ وَالتَّأْمِیْنِ۔ ))
    صحیح سنن ابن ماجۃ، رقم: ۶۹۷[/font]
    ۔
    ’’رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: یہودی تم لوگ سے جتنا سلام اور آمین کہنے سے جلتے ہیں اتنا کسی اور عمل سے نہیں جلتے۔‘‘
     
  3. عبد الرحمن یحیی

    عبد الرحمن یحیی -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 25, 2011
    پیغامات:
    2,312
    [font="al_mushaf"]اللہ اکبر

    جو آمین کہنے کے قائل نہیں اللہ ان کے سینے کھول دے

    تاکہ وہ بھی آمین کی برکات سے مستفید ہو سکیں

    آمین


    جزاك اللہ خیرا بھائی
    [/font]
     
  4. نعیم یونس

    نعیم یونس -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 24, 2011
    پیغامات:
    7,922
    اللهم آمین
     
  5. ام ثوبان

    ام ثوبان رحمہا اللہ

    شمولیت:
    ‏فروری 14, 2012
    پیغامات:
    6,690
    آمین یا رب العالمین
     
  6. محمد آصف مغل

    محمد آصف مغل -: منتظر :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 18, 2011
    پیغامات:
    3,848
    جزاکم اللہ خیرا و احسن الجزاء
     
  7. Ishauq

    Ishauq -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏فروری 2, 2012
    پیغامات:
    9,612
    جزاک اللہ خيرا
     
  8. irum

    irum -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏جون 3, 2007
    پیغامات:
    31,580
    جزاکم اللہ خیرا
     
  9. وحیداحمدریاض

    وحیداحمدریاض -: منفرد :-

    شمولیت:
    ‏فروری 25, 2011
    پیغامات:
    1,104
    جزاکم اللہ خیرا و احسن الجزاء​
     
  10. زبیراحمد

    زبیراحمد -: ماہر :-

    شمولیت:
    ‏اپریل 29, 2009
    پیغامات:
    3,446
    جزاک اللہ خیر
     

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں