ایک بھائی کا مسلہ

اسامہ طفیل نے 'گپ شپ' میں ‏ستمبر 2, 2013 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. اسامہ طفیل

    اسامہ طفیل نوآموز

    شمولیت:
    ‏اگست 5, 2013
    پیغامات:
    198

    اسلام علیکم
    ایک جاننے والے بھائی ہے ان کے ساتھ عجیب مسلہ در پیش ہے جس علاقے میں رہتے ہیں وہاں کوئی اہلحدیث مسجد نہیں دو مساجد ہیں وہ بریلویوں کی ہیں وہ وہاں نماز پڑھنے گئے تو پہلے سنت پڑبھی اور رفع الیدین کیا تو سب لوگ گھور کر دیکھنے لگے وہ پہلی صف میں تھے امام صاحب آئے تو ایک نمازی نے ان کے کان میں کچھ کہا جس کے بعد امام صاحب نے انہیں جگہ بدلنے کا حکم صادر فرما دیا۔۔۔۔اب وہ بھائی مسجد نیہں جاتے اور گھر میں نماز پڑھتے ہیں انہیں خدشہ ہیں کہیں لوگ انہیں ایزا نہ دینے لگیں مکان بدلنے کی ان کی اسطاعت نیہں انہیں کیا کرنا چاہیے؟
     
  2. اسامہ طفیل

    اسامہ طفیل نوآموز

    شمولیت:
    ‏اگست 5, 2013
    پیغامات:
    198
    پاکستان میں قرآنن کی بے حرمتی اور توہیں رسالت کا الزام لگا کر کچھ لوگوں کو زندہ جلانے کے واقہ ہو چوکے ہیں وہ مسجد جانے سے کتراتے ہیں کے ان پر وہابی گستاخے رسول کا الزام لگا کر نشانہ نہ بنا لیا جائے
     
  3. اویس سلفی

    اویس سلفی --- V . I . P ---

    شمولیت:
    ‏اکتوبر، 10, 2012
    پیغامات:
    447
    سیالکوٹ میں بھی ایک حنفی مسلک کی مسجد ھے جہاں رفع الیدین کرو تو نماز کہ دوران ہی باہر نکال دیتے ھیں
     
  4. بابر تنویر

    بابر تنویر -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏دسمبر 20, 2010
    پیغامات:
    7,318
    اس بار میرے مشاہدے کے مطابق سیالکوٹ میں اہل حدیث کی کافی مساجد بن چکی ہیں۔ کیا یہ بہتر نہیں کے چاہے کچھ دور ہی جانا پڑے انہی مساجد میں نماز ادا کی جاۓ۔
     
  5. اویس سلفی

    اویس سلفی --- V . I . P ---

    شمولیت:
    ‏اکتوبر، 10, 2012
    پیغامات:
    447
    جی بھائی میں تو کسی ہنفی مسلک کی مسجد میں نہی جاتا یہ تو کچھ دوستوں نے بتیا
     
  6. اسامہ طفیل

    اسامہ طفیل نوآموز

    شمولیت:
    ‏اگست 5, 2013
    پیغامات:
    198
    جی ہمارے ہاں جو اہل حدیث کی مسجد ہے وہاں اگر شیعہ یا بریلوی آجائے کوئی منہ نہیں بناتا اور یہ حنفی جن کو بڑا نرم مزاج والا سمجھا جاتا ہے خود ہی منصف خود ہی جج بن کر دوسروں سزا دینا باعث ثواب سمجھتے ہیں ہروقت وہابی فوبیا میں مبتلا رہتے ہیں
     
  7. ابوبکرالسلفی

    ابوبکرالسلفی محسن

    شمولیت:
    ‏ستمبر 6, 2009
    پیغامات:
    1,672
    ایک ہمارے دفترکے ساتھی فرما رہے تھے کہ کراچی گلشن میں‌ایک مسجد ہے جسے طالبان کی مسجد کہا جاتا ہے ان کا امتیاز یہ ہے کہ اگر کوئی بغیر داڑھی والا ان کی مسجد میں آجائے تو اسے پیار و محبت سے پکڑ کر باہر نکال دیتے ہیں۔(اناللہ وانا الیہ راجعون)۔ خیر میں کبھی خود اس مسجد میں‌نہیں‌گیا۔

    جان کے خطرے کو ملحوظ خاطر رکھ کر تو اھل حدیث‌مسجد میں بھی باجماعت و فردی نماز ترک کرنا جائز ہے، جیسے آپ صلی اللہ علیہ وسلم نبوت کے کچھ پہلے سالوں‌میں‌بیت اللہ میں‌نماز نہیں‌پڑھا کرتے تھے بلکہ گھروں‌میں‌ہی ادا کر لیا کرتے تھے۔
    کوشش کریں‌کہ نماز باجماعت ادا کریں کسی حنفی مسجد جہاں‌بظاہر شرک کے مظاہر موجود نہ ہوں۔ ویسے زیادہ تر بریلویوں‌کی مساجد میں یا رسول اللہ المدد یا علی المدد وغیرہ کے نعرے لکھے ہوتے ہیں‌ ان کے ہوتے ہوئے ایسی مساجد میں نماز نہیں‌پڑھنی چاہیے۔ اس کے برعکس دیوبندیوں‌ کی مساجد ان سے پاک ہوتی ہیں۔ ماشاء اللہ۔ لیکن کوشش کرنی چاہیے کہ اھل حدیث امام ہی ڈھونڈا جائے۔ یہ سب حالات مجبوری کی بناء پر ہیں۔

    اس بارے میں‌مزید جاننے کے لئے یہاں‌رجوع کریں۔
    اہل بدعت وفسق کے پیچھے نماز کے بارے میں صحیح سلفی مؤقف - URDU MAJLIS FORUM


    واللہ اعلم۔
     
  8. Ishauq

    Ishauq -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏فروری 2, 2012
    پیغامات:
    9,612
    ھمارے گاوں میں دو نوں مساجد حنفی دیوبندی مکتبہ فکر کی ہیں. وہاں میں نے ایسی پرابلم کبھی نہی دیکھی. کوئی کسی رفع الیعدین سے نہی روکتا. حتی کہ رمضان المبارک میں مسجد میں جماعت دعوہ والے اکثر درس بھی دینے آتے ہیں.
     
  9. ساجد تاج

    ساجد تاج -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 24, 2008
    پیغامات:
    38,756
    نماز کیا صرف اہل الحدیث کی مسجد میں‌ہی پڑھی جا سکتی ہے؟

    کیا اہل الحدیث کا لیبل اپنے ساتھ لگانا شریعیت کے لحاظ سے صحیح ہے ؟ یا یوں کہنا کہ ہم جماعت اہل الحدیث سے تعلق رکھتے ہیں کیا کسی کے پوچھنے پر یہ نہیں‌کہا جا سکتا کہ ہم مسلمان جماعت سے ہیں، کسی فرقے کا نام لینا ضروری ہے کیا اور کتنا ضروری ہے ؟
     
  10. ابوبکرالسلفی

    ابوبکرالسلفی محسن

    شمولیت:
    ‏ستمبر 6, 2009
    پیغامات:
    1,672
    نماز صحیح العقیدہ، متبع سنت کے پیچھے ہی پڑھی جانی چاہیے۔ مگر غیر سلَفی و اھل حدیث امام نہ ہونے کی وجہ سے نماز کو وقت سے موخر نہیں‌کیا جائیگا یا پھر جماعت نہیں‌چھوڑی جائیگی بلکہ غیر سلفی امام کے پیچھے نماز پڑھ لی جائیگی بشرطیکہ وہ مسلمان ہو۔ یہی سلف الصالحین کی سمجھ ہے۔


    یہ ضروری ہے۔
    سلفی منہج کی تعریف، امتیازات اور اصلاحی دعوت (سلفیت کی تعریف) - URDU MAJLIS FORUM
    مسلمانوں کی فلاح ونشاۃ ثانیہ کا واحد راستہ - URDU MAJLIS FORUM
    فقہی مذاہب کی تقلید اور سلفی منہج میں فرق - شیخ محمد بن عمر بازمول حفظہ اللہ - URDU MAJLIS FORUM
    : سلفی منہج کی جانب انتساب کرنا - URDU MAJLIS FORUM
    سلفیت کے کیا معنی ہیں؟ یہ کس کی طرف نسبت ہے؟ شرعی نصوص کی تفسیر کے بارے میں‌فہم سلَف سے نکالا جائے؟

    جی ہاں‌، اپنی نسبت کرنا ضروری ہے تاکہ حق و باطل کی پہچان ہو سکے ورنہ آپ سب کو حق کہیں۔ اور اگر کسی کو حق یا کسی کو باطل پر سمجھتے ہیں‌ تو پھر اس کا اظہار بھی ضروری ہے۔
    بس اتنا سمجھ لیجئے کہ ہمیں کتاب وسنت یعنی وحی کو کیسے سمجھنا ہے! اگر صحابہ کرام اس نظریہ کے قائل تھے تو ہمیں‌بھی قائل ہونا چاہیے، تابعین قائل تھے تو ہمیں‌ بھی ہونا چاہیے۔
    رہا مسئلہ جماعت کا تو جماعت ایک ہی ہے۔ اھل السنۃ والجماعۃ۔ سنت کی اتباع کرنے والے اور جماعت کے ساتھ رہنے والے۔ خوارج کے خلاف جو سنت سے ہٹ گئے اور جماعت المسلمین سے نکل گئے۔
    اپنی سیاسی و مزہبی جماعتیں‌بنانا یہ صحابہ کرام کا طریقہ نہیں۔

     
  11. dani

    dani نوآموز.

    شمولیت:
    ‏اکتوبر، 16, 2009
    پیغامات:
    4,329
    تواڈی خیر پہلے ہی کاکے نماز باجماعت کو آؤٹ آف فیشن سمجھتے ہیں آپ نئے بہانے دے دیں بھائن اپنے محلے آفس کے لوگوں کو سب پتہ ہوتا ہے لوگوں سے مل جل کر رہیں تو یہ نہیں ہوتا جدھر زیادہ مسئلہ ہو اس مسجد کو چھوڑ کر کہیں اور ڈھونڈ لیں پر اللہ کے دربار میں حاضری نہ چھوڑیں اچھا ہے مسجد میں مر بھی گئے تو جنت تو پکی ہے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  12. اسامہ طفیل

    اسامہ طفیل نوآموز

    شمولیت:
    ‏اگست 5, 2013
    پیغامات:
    198
    بھائی وہ بھائی جہاں رہتے ہے صاف لکھا میں نے اہحدیث مسجد نہیں اور آپ تو ایسے فرمارہے ہیں جیسے پاکستان میں کوئی فرقہ واریت نہیں صرف بہانہ ہے اور کسی قرآن و حدیث میں نہیں لکھا جہاں فرقہ واریت پر نشانہ بنایا جاتا ہو وہاں جاتے رہو جب لوگ سڑکوں پر گھسٹے پتھر انٹیں ماریں گستاخ رسول کہیں کیونکہ آپ کے عقائد مختلف ہیں الٹا لٹکا کر آگ لگادیں تو سیدھا جننت میں جاؤ گے کہنا کے کیا ہے صرف ٹائپ ہی کرنا ہے جن کے ساتھ ہوچکا ان کو پوچھیں مارنے والے تو دندناتے پھر رھے ہیں مرنے والوں کے گھر کوئی کمانے والا نہیں پچے یتیم ہوگئے عورتیں بیوہ اور ان کا قصور کیا تھا؟جان کی حفاظت کرنا بری بات ہے؟بہانہ ہے جان بوجھ کر اپنی جان کو خطرہ میں ڈالنا بھی خودکشی کے ذمرہ میں آتا ہے شہید نہیں
     
  13. بابر تنویر

    بابر تنویر -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏دسمبر 20, 2010
    پیغامات:
    7,318
    السلام علیکم ر حمتہ اللہ و برکاتہ،
    دوستو! سوال تو یہ سوال و جواب کے زمرے کا تھا ۔ تاکہ علماء اس کا جواب قران و حدیث کی روشنی میں دے دیتے۔ اور بات ختم ہو جاتی۔
    بہر حال دوستو یہ بحث تو شائد ختم نہیں ہوگی۔ اگر چاہیں تو اس بحث کو یہاں موقوف کرکے سوال و جواب کے زمرے میں اس حوالے سے سوال کرلیں اور قران و حدیث کے مطابق جواب حاصل کرلیں۔
    آپ سب کی بہت بہت مہربانی۔
     
Loading...

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں