بحیرہ مردار گناہوں پر ڈٹے رہنے والی قوم کا مدفن

عائشہ نے 'قرآن - شریعت کا ستونِ اوّل' میں ‏فروری 27, 2015 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    23,965
    بسم اللہ الرحمن الرحیم
    السلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ
    قرآن مجید بار بار اپنے قاری کو پہلے گزر جانے والی قوموں کے حالات دیکھنے اور ان سے عبرت لینے کی نصیحت کرتا ہے۔ دنیا میں آج بھی وہ مقامات عبرت موجود ہیں جو گناہوں پر ڈٹے رہنے والی قوموں کا انجام یاد دلاتے ہیں۔ بحیرہ مردار بھی ایسا ہی ایک مقام ہے جب اس کے کنارے بسنے والی بستیوں سدوم اور عامورہ نے گناہوں پر ڈھٹائی سے ڈٹے رہنے کی حد کر دی تو بالآخر عذاب کے فرشتے آئے:
    [TRADITIONAL_ARABIC]قَالُوا يَا لُوطُ إِنَّا رُسُلُ رَبِّكَ لَن يَصِلُوا إِلَيْكَ ۖ فَأَسْرِ بِأَهْلِكَ بِقِطْعٍ مِّنَ اللَّيْلِ وَلَا يَلْتَفِتْ مِنكُمْ أَحَدٌ إِلَّا امْرَأَتَكَ ۖ إِنَّهُ مُصِيبُهَا مَا أَصَابَهُمْ ۚ إِنَّ مَوْعِدَهُمُ الصُّبْحُ ۚ أَلَيْسَ الصُّبْحُ بِقَرِيبٍ ﴿٨١﴾فَلَمَّا جَاءَ أَمْرُنَا جَعَلْنَا عَالِيَهَا سَافِلَهَا وَأَمْطَرْنَا عَلَيْهَا حِجَارَةً مِّن سِجِّيلٍ مَّنضُودٍ ﴿٨٢﴾مُّسَوَّمَةً عِندَ رَبِّكَ ۖ وَمَا هِيَ مِنَ الظَّالِمِينَ بِبَعِيدٍ ﴿٨٣[/TRADITIONAL_ARABIC]
    ترجمہ: فرشتوں نے کہا اے لوط! ہم تیرے پروردگار کے بھیجے ہوئے ہیں ناممکن ہے کہ یہ تجھ تک پہنچ جائیں پس تو اپنے گھر والوں کو لے کر کچھ رات رہے نکل کھڑا ہو۔ تم میں سے کسی کو مڑ کر بھی نہ دیکھنا چاہئے، بجز تیری بیوی کے، اس لئے کہ اسے بھی وہی پہنچنے واﻻ ہے جو ان سب کو پہنچے گا، یقیناً ان کے وعدے کا وقت صبح کا ہے، کیا صبح بالکل قریب نہیں (81)پھر جب ہمارا حکم آپہنچا، ہم نے اس بستی کو زیر وزبر کر دیا اوپر کا حصہ نیچے کر دیا اور ان پر کنکریلے پتھر برسائے جو تہ بہ تہ تھے(82)تیرے رب کی طرف سے نشان دار تھے اور وه ان ﻇالموں سے کچھ بھی دور نہ تھے ۔۔۔سورۃ ھود

    [TRADITIONAL_ARABIC]وَلُوطًا إِذْ قَالَ لِقَوْمِهِ أَتَأْتُونَ الْفَاحِشَةَ مَا سَبَقَكُم بِهَا مِنْ أَحَدٍ مِّنَ الْعَالَمِينَ ﴿٨٠﴾إِنَّكُمْ لَتَأْتُونَ الرِّجَالَ شَهْوَةً مِّن دُونِ النِّسَاءِ ۚ بَلْ أَنتُمْ قَوْمٌ مُّسْرِفُونَ ﴿٨١﴾وَمَا كَانَ جَوَابَ قَوْمِهِ إِلَّا أَن قَالُوا أَخْرِجُوهُم مِّن قَرْيَتِكُمْ ۖ إِنَّهُمْ أُنَاسٌ يَتَطَهَّرُونَ ﴿٨٢﴾فَأَنجَيْنَاهُ وَأَهْلَهُ إِلَّا امْرَأَتَهُ كَانَتْ مِنَ الْغَابِرِينَ ﴿٨٣﴾وَأَمْطَرْنَا عَلَيْهِم مَّطَرًا ۖ فَانظُرْ كَيْفَ كَانَ عَاقِبَةُ الْمُجْرِمِينَ ﴿٨٤
    [/TRADITIONAL_ARABIC]
    ترجمہ: اور ہم نے لوط (علیہ السلام) کو بھیجا جبکہ انہوں نے اپنی قوم سے فرمایا کہ تم ایسا فحش کام کرتے ہو جس کو تم سے پہلے کسی نے دنیا جہان والوں میں سے نہیں کیا (80)تم مردوں کے ساتھ شہوت رانی کرتے ہو عورتوں کو چھوڑ کر، بلکہ تم تو حد ہی سے گزر گئے ہو (81)اور ان کی قوم سے کوئی جواب نہ بن پڑا، بجز اس کے کہ آپس میں کہنے لگے کہ ان لوگوں کو اپنی بستی سے نکال دو۔ یہ لوگ بڑے پاک صاف بنتے ہیں (82)سو ہم نے لوط (علیہ السلام) کو اور ان کے گھر والوں کو بچا لیا بجز ان کی بیوی کے کہ وه ان ہی لوگوں میں رہی جو عذاب میں ره گئے تھے (83)اور ہم نے ان پر خاص طرح کا مینہ برسایا پس دیکھو تو سہی ان مجرموں کا انجام کیسا ہوا؟(84)سورۃ الاعراف
    اس کے بعد حضرت لوط علیہ السلام ایمان والوں کے ساتھ صوغر کی بستی ہجرت فرما گئے جس کے دوران سدوم اور عامورہ پر شدید عذاب آ گیا جس نے انہیں مٹا کر رکھ دیا۔
    آج بحیرہ مردار ایک ایسی جھیل ہے جو سطح سمندر سے ایک ہزار فٹ پست ہے۔اسی کے کنارے ان برباد قوموں کے آثار ملے ہیں۔ کچھ عرصہ قبل یہ ثابت ہوا کہ یہ کرہ ارض کا پست ترین مقام ہے۔ آج بھی اس کے ساحلی نشیبی علاقے میں جو سدوم کا مسکن تھا 90 فی صد سے زائد سلفر یا گندھک Sulfur پر مشتمل کنکر بکھرے پڑے ہیں جو انتہائی آتش گیر مادہ ہے۔ (ہمارے گھروں میں آگ جلانے کے لیے استعمال ہونے والی ماچس اسی سلفر پر مشتمل ہوتی ہے۔ ) ماہرین ارضیات کےمطابق یہ کنکر کسی جیو -تھرمل ایکٹوٹی کا نتیجہ نہیں کیوں کہ جیو تھرمل ایکٹوٹی سے بننے والے پتھروں میں سلفر 40 فی صد سے زائد نہیں ہوتا ۔ یہاں جا بجا جلی ہوئی چٹانیں اور غار ہیں جن پر جلنے کے اثرات واضح ہیں۔ آج بھی اس علاقے پر ویرانی کا راج ہے، نباتات اور جاندار نہ ہونے کے برابر ہیں دور دور تک زمین پر راکھ اور جلنے کے اثرات واضح ہیں۔ قریبی پہاڑیاں مخدوش حالت میں ہیں۔
    اس علاقے میں موجود بحیرہ مردار دنیا میں سب سے زیادہ نمکین پانی کی جھیل ہے۔ اس میں کوئی آبی جانور نہیں پائے جاتے اس لیے کہ یہ زندگی کے لیے انتہائی ناموزوں ہے، اس پانی کو پینا ممکن نہیں۔ آبی پودوں میں سے صرف کچھ الجائی یہاں پائے گئے ہیں۔ نمک کی وجہ سے پانی انتہائی بھاری ہے کہ چیزیں اس کی سطح پر تیرتی ہیں۔

    [​IMG]
    جلی ہوئی چٹانیں
    [​IMG]
    سلفر والے کنکر جن کی بیرونی سطح جل چکی ہے جب کہ اندر سلفر موجود ہے۔
    [​IMG]

    برباد علاقے کی چٹانوں میں موجود کنکریوں کے نشان
    [​IMG]

    جلی ہوئی سطح والی زمین جس پر سلفر کے کرسٹل موجود ہیں۔
    [​IMG]

    [​IMG]
    [​IMG]

    بربادی اور ویرانی کا منہ بولتا ثبوت
    [​IMG]

    بحیرہ مردار کے قریب سدوم کے پہاڑ

    [​IMG]

    [​IMG]

    [​IMG]

    [​IMG]

    بشکریہ :http://www.arkdiscovery.com/sodom_&_gomorrah.htm
    http://www.biblewalks.com/Sites/SodomCaves.html
     
    Last edited: ‏فروری 27, 2015
    • پسندیدہ پسندیدہ x 5
  2. ام محمد

    ام محمد -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏فروری 1, 2012
    پیغامات:
    3,166
    جزاک اللہ خیرا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  3. بابر تنویر

    بابر تنویر منتظم

    شمولیت:
    ‏دسمبر 20, 2010
    پیغامات:
    6,408
    اهْدِنَا الصِّرَ‌اطَ الْمُسْتَقِيمَ ﴿٦﴾ صِرَ‌اطَ الَّذِينَ أَنْعَمْتَ عَلَيْهِمْ غَيْرِ‌ الْمَغْضُوبِ عَلَيْهِمْ وَلَا الضَّالِّينَ ﴿٧
    ہم کو سیدھے رستے چلا (6) ان لوگوں کے رستے جن پر تو اپنا فضل وکرم کرتا رہا نہ ان کے جن پر غصے ہوتا رہا اور نہ گمراہوں کے (7)

    اللہ تعالی ہمیں ہر قسم کی نافرمانیوں محفوظ رکھے آمین! اور ان لوگوں میں شامل فرماۓ کہ جن پر اس کا انعام نازل ہوا نہ کہ ان لوگوں پر جو کہ اپنی نافرمانیوں اور سرکشیوں کے سبب اللہ کے عذاب کے حقدار ٹھہرے رہتی دنیا تک عبرت کا نشان بن گۓ
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 2
  4. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    23,965
    وایاک
     
  5. عطاءالرحمن منگلوری

    عطاءالرحمن منگلوری -: ماہر :-

    شمولیت:
    ‏اپریل 9, 2012
    پیغامات:
    1,373
    جزاک اللہ خیرا
    فاعتبروا یااولی الابصار
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 2
  6. اعجاز علی شاہ

    اعجاز علی شاہ -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏اگست 10, 2007
    پیغامات:
    10,214
    جزاک اللہ خیرا
    بہت ہی زبردست معلومات ہیں۔
    ماشاء اللہ تصاویر کے ساتھ آیات کو سمجھنے میں بہت آسانی ہوتی ہے۔
    بارک اللہ فی جھودکم
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 2
  7. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    23,965
    آمین
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  8. dani

    dani منتظر

    شمولیت:
    ‏اکتوبر، 16, 2009
    پیغامات:
    4,339
    اس مکروہ گناہ کی پاداش میں لوط علیہ السلام کی قوم پر اللہ تعالی نے کئی قسم کے عذاب نازل فرمائے تھے، وہ یہ ہیں:
    1۔ ان کی آنکھیں چھین لیں اور وہ اندھے ہو گئے اور پاگل بن گئے جیسا کہ اللہ تعالٰی فرماتے ہیں: فَطَمسنا اَعیُنَھُم (پس ہم نے ان کی آنکھیں ناپید کر دیں)
    2۔ ان پر گرج دار آواز بھیجی
    3۔ ان کے گھروں کو الٹ دیا۔ ان کا نچلا حصہ اوپر اور اوپر کا نیچے کر دیا۔
    4۔ نشان زدہ پتھروں کی ان پر بارش برسائی۔ پھر سب کے سب کو ہلاک کر دیا
    http://urdumajlis.net/index.php?thr...کتابچہ-ـ-یونیکوڈ-میں.16424/page-2#post-310754
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 3
  9. dani

    dani منتظر

    شمولیت:
    ‏اکتوبر، 16, 2009
    پیغامات:
    4,339
    وَلَقَدْ رَاوَدُوهُ عَن ضَيْفِهِ فَطَمَسْنَا أَعْيُنَهُمْ فَذُوقُوا عَذَابِي وَنُذُرِ
    اور ان (لوط علیہ السلام) کو ان کے مہمانوں کے بارے میں پھسلایا پس ہم نے ان کی آنکھیں اندھی کردیں، (اور کہہ دیا) میرا عذاب اور میرا ڈرانا چکھو
    سورة القمر
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  10. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    23,965
    جزاک اللہ خیرا۔
     

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں