موبائل اور اس کے آداب!

رفی نے 'موبائل کی دُنیا' میں ‏ستمبر 26, 2007 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. رفی

    رفی -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏اگست 8, 2007
    پیغامات:
    12,421
    اسلام علیکم دوستو!

    ہم میں سے اکثر دوستوں کے پاس موبائل موجود ہے اور جس تیزی سے یہ ٹیکنالوجی ترقی کر رہی ہے اس سے اگلے عشرے تک ہر امیر غریب کے پاس کم از کم ایک موبائل کی توقع ضرور کی جا سکتی ہے۔ جس طرح ہر ٹیکنالوجی انسان کے لیے فائدہ مند ثابت ہوتی ہے تو وہاں اس کے کچھ نقصانات بھی ضرور موجود ہوتے ہیں۔ ضرورت اس امر کی ہے کہ ہم موبائل کو استعمال کرنے سے پہلے اس کے آداب کو اچھی طرح جانتے ہوں اور ان پر عمل پیرا ہوں۔

    تو میری آپ سب سے استدعا ہے کہ اس سلسلے میں آپ بھی اپنی تجاویز پیش کریں اور موبائل کے آداب و اخلاق کو عام کرنے میں ہمارا ساتھ دیں۔

    1: مساجد میں داخل ہونے سے پہلے موبائل کو آف کردیں، اور ایک بار ضرور چیک کر لیں کہ موبائل صحیح طور پر آف ہو گیا ہے۔

    2: موبائل ایک ضرورت کی چیز ہے، اسے فیشن نہ بنائیں اور بلا وجہ استعمال کر کے دوسروں کو ذہنی پریشانی اور خود کو مالی پریشانی میں ڈالنے سے اجتناب کریں۔

    3: جہاں آپ کی باتوں سے دوسروں کے آرام و سکون میں خلل پہنچنے کا اندیشہ ہو وہاں ٹیکسٹ میسج سے کام چلائیں اور اپنے فون کو سائلینٹ موڈ میں رکھیں۔

    4:عام مقامات پر باتیں کرتے وقت اپنی باتوں میں مکمل رازداری برتیں۔

    5: ہمیشہ نرم اور دھیمے لہجے میں بات کریں، موبائل فون کا مائکروفون انتہائی حساس ہوتا ہے جو کہ باریک سے باریک آواز کو بھی کیچ کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے، اسلئے بلا وجہ چیخ چنگھاڑ کر بات کرنے کے بجائے موبائل کا والیم سیٹ کریں اور ایسی جگہ کا انتخاب کریں جہاں سے دوسرے کے بات واضح سن سکیں اور اپنی بات اسے سنا سکیں۔

    6: موبائل کیمروں کا استعمال کرتے وقت ہمیشہ دوسروں کی پرائیویسی کا خیال رکھیں۔ بلااجازت کسی اور کی تصویر لینا جرم ہے۔

    7: غیر اخلاقی اور غیر اسلامی رنگ ٹونز سے اجتناب کریں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  2. ابن عمر

    ابن عمر رحمہ اللہ بانی اردو مجلس فورم

    شمولیت:
    ‏نومبر 16, 2006
    پیغامات:
    13,365
  3. bia786asrfamily

    bia786asrfamily -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏اگست 15, 2007
    پیغامات:
    1,951
    بہت اچھی معلومات شئیر کی ہے آپ نے رفی بھائی ....
     
  4. ابوعکاشہ

    ابوعکاشہ منتظم

    شمولیت:
    ‏اگست 2, 2007
    پیغامات:
    14,341
    رفی بھائی آپ نے بلکل صحیح کہاہے-ضرورت کی چیز ھے ضرورت کے لیے استعمال کرنا چاہیے فیشن کے لیے-
    اسلام فضول خرچی کی اجازت نہی دیتا
     
  5. طلحہ خان

    طلحہ خان محسن

    شمولیت:
    ‏مارچ 8, 2007
    پیغامات:
    372
    وعلیکم سلام اور شکریہ رفی بھائی
     
  6. راضی

    راضی -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏ستمبر 3, 2007
    پیغامات:
    10,529
    رفی بھائی آپنے بہت اچھی باتیں بتائی ہیں۔۔۔۔ایک دم حقیقت ہے۔۔۔آہو۔۔ایسا ہی ہونا چاہیئے۔۔۔
     
  7. رفی

    رفی -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏اگست 8, 2007
    پیغامات:
    12,421
    زمرد بھائی، بیا سسٹر، عکاشہ بھائی، طلحہ بھائی اور سعدی سسٹر آپ سب کا میری حوصلہ افزائی کرنے پر شکریہ!
     
  8. عبدالوھاب کاٹھ

    عبدالوھاب کاٹھ -: محسن :-

    شمولیت:
    ‏مارچ 5, 2007
    پیغامات:
    130
    رفی بھائی
    بہت اچھی معلومات شیئر کی ہیں
    جزاک اللہ
    خوش رہیں
     
  9. 03arslan

    03arslan -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏اگست 11, 2009
    پیغامات:
    418
    وعلیکم السلام و دحمت اللھ وبرکاتھ
    ماشا اللھ
    لیکن میرا خیال ھے کھ اگر تصویر بنوانے والا اجازت دے تب بھی تصویر لینا جائزنھیں۔
     
  10. ابومصعب

    ابومصعب -: منفرد :-

    شمولیت:
    ‏اپریل 11, 2009
    پیغامات:
    4,067
    لیکن موبائیل خاموش رکھنا بھی (موبائیل کے اخلاقیات کے زمرہ میں‌آنے والی بات ہوسکتی ہے۔۔کیونکہ بعض دفعہ کسی کو اہم کام سے کال کرنا ہوتا ہے۔۔لیکن موبائل کے خاموش ہونے سے نقصان کا اندازہ ہے)۔
    میں تو ضرورت کے مطابق موبائیل خاموش رہنے کو۔۔۔ایسے تعبیر کرتا ہوں جیسے۔۔" کوئی ایک شخص کسی سے کچھ بات کرنا چاہتا ہو، اور دوسرا متواتر خاموش رہکر صرف سنتا چلا جاتا ہے" بنا جواب دئے۔۔۔اس سے دوسرے کو تکلیف پہنچ سکتی ہے۔
    (ویسے یہ بات کچھ ازراہ تفنن اور کچھ سیرئیس ہے۔۔۔کچھ بری لگے تو معاف اچھی لگے تو۔۔۔گڈ)
     
  11. ابومصعب

    ابومصعب -: منفرد :-

    شمولیت:
    ‏اپریل 11, 2009
    پیغامات:
    4,067
    حوصلہ افزائی تو ہمیشہ کی جاتی ہے۔۔لیکن اکثر آپ نظر انداز کردیتے ہیں۔۔۔:00003::00003::00003:
     
  12. 03arslan

    03arslan -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏اگست 11, 2009
    پیغامات:
    418
    جہاں تک ممکن ہو سکے
    موسیقی والی ٹون سے بچ کر رھیں۔
     
  13. عطاءالرحمن منگلوری

    عطاءالرحمن منگلوری -: ماہر :-

    شمولیت:
    ‏اپریل 9, 2012
    پیغامات:
    1,471
    موبائل کے آداب اچھا مضمون ہے۔اب تو یہ متعدی بیماری بن گیا ہے۔خاص طور پر بچوں کو دور رکھیں ورنہ پچھتائیں گے۔
    رحمن ملک صاحب موبائل کو دہشت گردوں کا ہتھیار سمجھتے ہیں،اور بند کرنے کا عندیہ بھی دے چکے ہیں۔اس لیے ذیادہ پریشان ہونے کی ضرورت بھی نہیں۔مسئلہ حل ہو جائے گا۔نہ رہے بانس نہ بجے بانسری۔۔۔۔۔۔
     

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں