کیا عقیدہ میں تقلید جائز ہے؟؟؟؟

اہل الحدیث نے 'اتباعِ قرآن و سنت' میں ‏فروری 26, 2011 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. اہل الحدیث

    اہل الحدیث -: ممتاز :-

    پیغامات:
    4,974
    تقلید بھی عقیدہ کی بنیاد نہیں بن سکتی کیونکہ مقلد کے پاس دلیل نہیں ہوتی اورعقیدہ کی بنیادقرآن وحدیث کے نصوص پر ہے عقائد میں تقلید کا نظریہ مشرکین کا تھا جس کا اسلام نے بڑی سختی سے رد کیا ہے اوردلیل کی پیروی کا حکم دیا ہے جیسا کہ اللہ تعالیٰ نے فرمایا:

    [font="al_mushaf"]
    { وَ مِنَ النَّاسِ مَنْ یُّجَادِلُ فِی اللّٰہِ بِغَیْرِ عِلْمٍ وَّ لَاھُدًی وَّ لَاکِتٰبٍ مُّنِیْرٍ ۔ وَ اِذَا قِیْلَ لَھُمُ اتَّبِعُوْا مَآ اَنْزَلَ اللّٰہُ قَالُوْا بَلْ نَتَّبِعُ مَا وَجَدْنَا عَلَیْہِ اٰبَآئَنَا اَوَلَوْ کَانَ الشَّیْطٰنُ یَدْعُوْھُمْ اِلٰی عَذَابِ السَّعِیْرِ}۔
    [لقمان:۲۰۔۲۱]
    [/font]
    “اوربعض لوگ ایسے بھی ہیں جو اللہ تعالیٰ کے بارے میں بغیر علم بغیر ہدایت اوربغیر روشن کتاب کے جھگڑا کرتے ہیں اور جب ان کو کہا جاتاہے کہ جو اللہ تعالیٰ نے نازل کیا ہے تم اس کی پیروی کرو تو وہ کہتے ہیں (ہم اللہ کی طرف سے نازل کردہ کی پیروی نہیں کریں گے) بلکہ تواس کی پیروی کریں گے جس پر ہم نے اپنے بڑوں کوپایا۔ اگرچہ شیطان ان کوبھڑکنے والی آگ کی طرف دعوت دے۔ “

    مندرجہ بالا آیات نے مشرکین کے عقیدہ میں رجحان کو واضح کر دیا کہ وہ علم ہدایت اورروشن کتاب کے علاوہ اپنے بڑوں کی پیروی کرتے تھے فی اللہ کے لفظ نے واضح کر دیا کہ ان کا یہ رجحان عقیدہ کا ہی تھا تومعلوم ہوا کہ عقیدہ میں تقلید مشرکوں کا شیوہ اور طریقہ ہے مسلمان کو اپنے عقیدے کی بنیاد صرف قرآن اوراحادیث صحیحہ کوبنانا چاہیے تقلید سے عقیدہ کو نہیں ماننا چاہیے۔ تقلید توویسے مطلقا ہی حرام ہے خصوصا عقیدہ میں تو اس کا ذرہ بھر بھی جواز نہیں ہے اسی طرح اعتقاد کے مسائل میں کسی مجتہد کا اجتہاد رائے اورقیاس بھی حجت نہیں ہے کیونکہ اس سے یقین حاصل نہیں ہوتا بلکہ محض ھوائے نفس کی اتباع ہے جس کی قطعاً اجازت نہیں ہے ۔اللہ تعالیٰ فرماتے ہیں:

    [font="al_mushaf"]{وَ مَنْ اَضَلُّ مِمَّنِ اتَّبَعَ ھَوٰیہُ بِغَیْرِ ھُدًی مِّنَ اللّٰہِ ؟ اِنَّ اللّٰہَ لَا یَھْدِی الْقَوْمَ الظّٰلِمِیْنَ}۔ [القصص:۵۰][/font]
    "اوراس شخص سے زیادہ گمراہ کون ہو سکتا ہے جو اللہ تعالیٰ کی ہدایت کے بغیر اپنی خواہش کی پیروی کرتا ہے بے شک اللہ ظالم قوم کو ہدایت نہیں دیتا۔”

    معلوم ہوا کہ جوبغیر علم اور ہدایت کے کسی قسم کی خواہش کی پیروی کرتا ہے وہ ہدایت پر نہیں بلکہ گمراہی پر ہے اس لیے کسی ایک کو یہ حق نہیں کہ وہ اپنا عقیدہ اپنے استاد یا پیر کے عقیدے کے مطابق بنائے جس پر اس کے پاس کتاب وسنت سے دلیل نہیں ہے۔


    ماخوذ از عقیدہ اہل حدیث از شیخ محمد یحیی گوندلوی رحمہ اللہ تعالیٰ
     
    ابو ابراهيم نے شکریہ ادا کیا ہے.
  2. راجپوت

    راجپوت -: محسن :-

    پیغامات:
    116
    جزاکم اللہ خیرا واحسن الجزاء اہل الحدیث بھائی
     
  3. عاکف سعید

    عاکف سعید محسن

    پیغامات:
    181
    کتاب عقیدہ اہل حدیث از شیخ محمد یحیی گوندلوی رحمہ اللہ تعالٰی کا انٹرنیٹ ربط مل سکتا ہیں؟ یہ کتاب صحیح عقیدہ اہل سنت میں ہمارے لیے مزید راہنمائی کا ذریعہ ہو گی
     
  4. اہل الحدیث

    اہل الحدیث -: ممتاز :-

    پیغامات:
    4,974
    میں پی ڈی ایف بنا رہا ہوں۔ بنا کر دے دوں گا ان شاء اللہ
     
  5. ابو عبداللہ صغیر

    ابو عبداللہ صغیر -: ممتاز :-

    پیغامات:
    1,980
    جزاکم اللہ خیرا بھائی
     

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں