بدتمیز اینکر

mahajawad1 نے 'ذرائع ابلاغ' میں ‏اکتوبر، 6, 2011 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. mahajawad1

    mahajawad1 محسن

    شمولیت:
    ‏اگست 5, 2008
    پیغامات:
    473
    مبشّر لقمان کے چند پروگرامز دیکھنے کا اتفاق ہوا، جن میں اس نے مسلمانوں کے قبلہ اول اور بائبل وتوریت میں موجود آدم اور حوا کی، اور دو ایک اور روایات کو لے کر انتہائی بے سروپا سوالات اٹھائے۔ ان پروگرامز میں اسکی پوری کوشش یہ تھی کہ پروگرام کے شرکاء کی بات کاٹ کر ان پر اپنی رائے ٹھونسے۔ اس نے کسی بھی ایک شریک کی کوئی بھی بات مکمل نہیں ہونے دی جو کہ میرے نزدیک ایک بددیانتی کی بات ہے۔ اس وقت جبکہ امت مسلمہ ویسے ہی داڑھی کی لمبائی، اونچے پاجامے اور رفع یدین جیسے مسائل میں الجھی ہوئی ہے اس طرح کے موضوعات زیر بحث لانے سے لوگوں کے شکوک اور شبہات میں اضافہ ہی ہوتا نہ کہ اسلام کی کوئی خدمت ہوتی ہے۔ آجکل کہ یہ رنگ رنگیلے اینکرز لوگوں کو ایک نئے اسلام سے متعارف کروانے کی سعی میں لگے ہوئے ہیں۔ اس کو بعض علماء منہ توڑ جواب بھی دے دیتے ہیں لیکن اپنی جہالت کو ثابت کرنے کیلئے یہ شخص بحث کیے جاتا ہے اور جہاں اس کو منہ توڑ جواب ملتا ہے یہ، یا تو بریک پر چلا جاتا ہے یا کسی اور شریکِ پروگرام سے سوال کرنے لگتا ہے۔
    بہتر یہ ہوتا کہ مبشّر صاحب اپنی صحافتی ذمہ داریوں کو حکومت کی ناکامیوں، سیاستدانوں کی پول کھولنے، انکی بد عنوانیوں کا رونا رونے اور انکی ڈگریوں کو کھنگالنے تک محدود رکھتے۔ دینی معلومات کے حوالے سے یہ کتنے پانی میں ہیں اسکا اندازہ حافظ سعید والے پروگرام میں ہو گیا تھا جس میں یہ ایک آیت غلط پڑھ گئے تھے۔ اور حافظ صاحب کا ظرف دیکھئے کہ انہوں نے اسے ٹوکا تک نہیں۔
    ایک اور پروگرام میں اس نے ایک بزرگ صحافی کے ساتھ انتہا درجے کی بدتمیزی کی اور یہ احساس دلانے کے باوجود کے اسکو غلط فہمی ہوئی ہے اس نے معافی تو کجا معذرت تک کرنے کی زحمت نہیں کی۔ اس سے پہلے بھی یہ ڈاکٹر اسرار احمد مرحوم سے بھی ایسی ہی بدتمیزی کر چکا ہے ۔ ان حرکتوں سے نہ صرف اسکے اصل خاندانی پس منظر اور اسکی تربیت کا اندازہ ہوتا ہے بلکہ اس بات کا بھی اندازہ ہوتا ہے کہ جو لوگ اسکے زیر تربیت ہیں یہ ان کو کیا سکھا رہا ہے ۔ اگرچہ اس نے کچھ اچھے پروگرامز بھی کئے ہیں مثلاً والدین کے متعلق ایک پرگرام جو پوائینٹ بلینک میں کیا تھا وہ قابل تعریف ہے لیکن بزرگ صحافی کے ساتھ کئے گئے اسکے سلوک نے اسکے دوغلے پن کو ظاہر کر دیا ہے۔ اگر اسکو بزرگ والدین کے ساتھ کئے گئے اولاد کے مظالم پر اتنا ہی دکھ ہوتا تو اپنے والد جیسے بزرگ سے اتنی بدتمیزی نہ کرتا۔
    اوپر ذکر کئے گئے پروگرام کا لنک


    http://www.dunyanews.tv/index.php?key=Q2F0SUQ9cHYjSUQ9MzgwNyNmTGFnPWVwLjQ3NDEscGFydC5BTEwscGRhdGUuMjAxMS0wNy0yNg==

    http://www.dunyanews.tv/index.php?key=Q2F0SUQ9cHYjSUQ9MzgwNyNmTGFnPWVwLjQ3NDYscGFydC5BTEwscGRhdGUuMjAxMS0wNy0yNw==
     
    • اعلی اعلی x 1
  2. اہل الحدیث

    اہل الحدیث -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏مارچ 24, 2009
    پیغامات:
    4,974
    یہ اینکرز دراصل ایک مافیہ کی حیثیت رکھتے ہیں۔ بلیک میلنگ اور مجبوریوں سے ناجائز فائدہ اٹھانے میں برابر کے ذمہ دار!!!

    مبشر لقمان کے بارے میں تو حافظ ابتسام الہی ظہیر حفظہ اللہ نے کافی کچھ بتلایا تھا۔ بلکہ باقاعدہ اس کی بے حیائی اور بے غیرتی پر خطبہ جمعہ میں بھی لوگوں کو آگاہ کیا تھا۔
    اپنے پروگرام میں‌مبشر لقمان نے ایک معروف سیاسی خاندان کی خاتون اور ایم پی اے کے ساتھ نازیبا حرکات کا ارتکاب کیا اور وہ خاتون اس سے بچاؤ کے لیے سمٹ رہی تھی۔
    اسی طرح ایک دوسرے پروگرام میں قادیانیوں کے بارے میں موقف پیش کرنے پر واضح طور پر ابتسام صاحب کو نظر انداز کرتے ہوئے دوسرے لوگوں کو موقع دیا کہ ایک لبرل پروگرام کا تاثر ابھرے۔ اس پر حافظ صاحب نے کہا کہ یہ میرے نبی صلی اللہ علیہ وسلم کی حرمت کا سوال ہے۔ اور دونوں میں آف دی کیمرہ کافی تکرار ہوئی جس پر پروڈیوسر کو کچھ عرصہ کے لیے پروگرام آن ائیر کرنے سے رکنا پڑا۔
    بہر حال اغیار کے اشاروں پر اسلام اور پاکستان کے خلاف کام کرنے والے ان چہروں کو ہمیں پہچاننے کی ضرورت ہے جن کا موقف کسی سٹریٹیجی کی بنیاد پر نہیں، بلکہ لفافوں میں بند نوٹوں کے وزن پر منحصر ہوتا ہے۔ اور جو حالات کی وہ تصویر عوام کو دکھا کر گمراہ کرتے ہیں، جسے اغیار دکھانا چاہتے ہیں۔ پاکستان میں شدت مسندی کے بڑھتے ہوئے رجحانات کی ایک بڑی وجہ یہ مادر پدر آزاد میڈیا بھی ہے جو کسی وژن کے بغیر صرف مسالہ اور گلیمر عوام کے سامنے پیش کرتا ہے!!! اس لیے جب بھی کوئی خبر سنیں تو اس پر فورا" رائے قائم نہ کریں بلکہ کچھ وقت دیں اور حقائق کے واضح ہونے کا انتظار کریں۔
     
  3. اعجاز علی شاہ

    اعجاز علی شاہ -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏اگست 10, 2007
    پیغامات:
    10,324
    مبشر لقمان میں اچھی بات یہ ہے کہ وہ کھل کر بولتے ہیں اور انکشافات دشمنوں کے خلاف کرتے ہیں لیکن جب وہ اکیلے ہوتے ہیں۔
    جہاں تک ادب کا معاملہ ہے تو میں تو ان پروگرام کو دیکھنے میں اپنا وقت ضائع نہیں کرتا لیکن حافظ سعید حفظہ اللہ کے ساتھ ان کی گفتگو سے سن کر انداز ہوگیا تھا کہ یہ شخص اپنے آپ کو ہٹ دھرمی اور بے ادبی میں‌مشہور کرنا چاہتا ہے۔
     
  4. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,484
    ميرے پاس ان وڈيوزكا ربط كام نہيں كر رہا ۔
     
  5. marhaba

    marhaba ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏فروری 5, 2010
    پیغامات:
    1,667
    سیم پرابلم ادھر بھی ہے
     
  6. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,484
    ميرے خيال ميں مبشر لقمان كا نام ہی كا كافى ہے ۔۔۔
    كہتی ہے تجھ كو خلق خدا غائبانہ كيا ​


    يہ ليجيے متبادل روابط :
    Dunya News: Khari Baat
    Dunya News: Khari Baat
     
  7. بابر تنویر

    بابر تنویر منتظم

    رکن انتظامیہ

    شمولیت:
    ‏دسمبر 20, 2010
    پیغامات:
    7,313

    جی بھائ وہ یقینا "کھل کر" بلکہ "کھل کھلا کر" بولتے ہیں۔ اینکر کا کام تو یہ ہے کہ شرکاہ کو بولنے کا موقع دے مگر یہ حضرت خود ہی بولے چلے جاتے ہیں بلکہ اپنی راۓ بھی دوسروں پر تھوپنے کی کوشش کرتے ہیں۔
    میرا گھر ٹی وی سے تو محروم ہے مگر ایک دو بار انٹرنیٹ کے ذریعے دنیا نیوز پر ان صاحب کا پروگرام دیکھنے کا اتفاق ضرور ہوا ہے۔
     
  8. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,484
    بڑا مبارك اور خوش قسمت گھر ہے !
    سو فى صد متفق !
    يہ كام بہت سے انٹرويور اور اينكرز كر رہے ہيں ۔
     
  9. جاسم منیر

    جاسم منیر Web Master

    شمولیت:
    ‏ستمبر 17, 2009
    پیغامات:
    4,638
    اصل میں مسئلہ یہ ہے کہ عوام ان کے خلاف کبھی نہیں بولیں گے، کیونکہ یہ اور ان جیسے دوسرے اینکرز عوام کے لیے ہیرو کی حیثیت رکھتے ہیں۔ وجہ یہی ہے کہ ان کے دو منہ ہیں۔ کرپشن اور لوٹ مار کے واقعات کو بھی بے نقاب کرتے ہیں، اور دوسری طرف مذہبی لوگوں کو کھل کر اپنی بدتمیزی کا نشانہ بھی بناتے ہیں۔ میں نے اب تک کوئی ایک اینکر پرسن بھی ایسا نہیں دیکھا جو کسی عالم دین کے ساتھ نرم لہجے اور تمیز سے بات کرے۔ ویسے تو یہ لوگ کسی کو بھی نہیں بخشتے لیکن داڑھی والے لوگ شاید ان کی آنکھوں میں‌بری طرح کھٹکتے ہیں۔
    دین اسلام کا معاملہ ہو تو ایسے اس پر بحث کریں گے کہ جیسے ان سے زیادہ کوئی نہیں جانتا۔ اور جب دین اسلام کے لیے کچھ کرنے لگیں گے، تو جھوٹے پیروں کو لا کر اپنے ٹاک شوز میں بٹھاتے ہیں۔
     
  10. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,484
    "سُن" ليں وڈیوز ... كافى مضحكہ خيز مواد ہے۔
    ۔
    برائی سے روکنا - URDU MAJLIS FORUM
     
  11. ابن قاسم

    ابن قاسم محسن

    شمولیت:
    ‏اگست 8, 2011
    پیغامات:
    1,719
    بچپن ہی سے شاید آینکر صاحب بنیادی اسلامی تعلیمات سے واقف نہیں ہیں، اس وجہ سے ایسے خیالات ظاہر کررہے ہیں۔
    اللہ تعالیٰ انہیں اور ہم سب کو نیک توفیق دے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  12. بابر تنویر

    بابر تنویر منتظم

    رکن انتظامیہ

    شمولیت:
    ‏دسمبر 20, 2010
    پیغامات:
    7,313
    آمین !
     
  13. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,484
    جيسا ميں نے پہلے كہا كافى مضحكہ خيز مواد ہے۔ اور ميں تھوڑا تھوڑا كر كے لكھتى رہوں گی ان شاء اللہ
    ايك بات نوٹ كريں ضعيف اور موضوع احاديث كى بات كر کے صحيح احاديث كو بھی ان ہی ميں شامل كيا جا رہا ہے۔ يہ ربط ديکھيں... 24 منٹ 30 سکنڈپہ اور نيچے حديث كى صحيحين سے تخريج :

    http://youtu.be/85gw3YPryJs?t=24m30s


    عورت کی وراثت کے نئے قانون - URDU MAJLIS FORUM

    اب صرف صحيحين سے تخريج :
    صحيح البخارى : كتاب أحاديث الأنبياء / باب: خلق آدم عليه السلام وذريته . حديث نمبر : 3331 - حدثنا أبو كريب، وموسى بن حزام، قالا: حدثنا حسين بن علي، عن زائدة، عن ميسرة الأشجعي، عن أبي حازم، عن أبي هريرة رضي الله عنه، قال: قال رسول الله صلى الله عليه وسلم: «استوصوا بالنساء، فإن المرأة خلقت من ضلع، وإن أعوج شيء في الضلع أعلاه، فإن ذهبت تقيمه كسرته، وإن تركته لم يزل أعوج، فاستوصوا بالنساء»
    صحيح البخارى : كتاب النكاح ، باب الوصاة بالنساء ، 5186 - واستوصوا بالنساء خيرا، فإنهن خلقن من ضلع، وإن أعوج شيء في الضلع أعلاه، فإن ذهبت تقيمه كسرته، وإن تركته لم يزل أعوج، فاستوصوا بالنساء خيرا»
    ****
    صحيح مسلم : باب الوصية بالنساء ، 59 - (1468) حَدَّثَنَا عَمْرٌو النَّاقِدُ، وَابْنُ أَبِي عُمَرَ، وَاللَّفْظُ لِابْنِ أَبِي عُمَرَ، قَالَا: حَدَّثَنَا سُفْيَانُ، عَنْ أَبِي الزِّنَادِ، عَنِ الْأَعْرَجِ، عَنْ أَبِي هُرَيْرَةَ، قَالَ: قَالَ رَسُولُ اللهِ صَلَّى اللهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ: «إِنَّ الْمَرْأَةَ خُلِقَتْ مِنْ ضِلَعٍ لَنْ تَسْتَقِيمَ لَكَ عَلَى طَرِيقَةٍ، فَإِنِ اسْتَمْتَعْتَ بِهَا اسْتَمْتَعْتَ بِهَا وَبِهَا عِوَجٌ، وَإِنْ ذَهَبْتَ تُقِيمُهَا، كَسَرْتَهَا وَكَسْرُهَا طَلَاقُهَا»
    60 - (1468) وحَدَّثَنَا أَبُو بَكْرِ بْنُ أَبِي شَيْبَةَ، حَدَّثَنَا حُسَيْنُ بْنُ عَلِيٍّ، عَنْ زَائِدَةَ، عَنْ مَيْسَرَةَ، عَنْ أَبِي حَازِمٍ، عَنْ أَبِي هُرَيْرَةَ، عَنِ النَّبِيِّ صَلَّى اللهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ قَالَ: «مَنْ كَانَ يُؤْمِنُ بِاللهِ وَالْيَوْمِ الْآخِرِ، فَإِذَا شَهِدَ أَمْرًا فَلْيَتَكَلَّمْ بِخَيْرٍ أَوْ لِيَسْكُتْ، وَاسْتَوْصُوا بِالنِّسَاءِ، فَإِنَّ الْمَرْأَةَ خُلِقَتْ مِنْ ضِلَعٍ، وَإِنَّ أَعْوَجَ شَيْءٍ فِي الضِّلَعِ أَعْلَاهُ، إِنْ ذَهَبْتَ تُقِيمُهُ كَسَرْتَهُ، وَإِنْ تَرَكْتَهُ لَمْ يَزَلْ أَعْوَجَ، اسْتَوْصُوا بِالنِّسَاءِ خَيْرًا»

    اور مفتى عبدالقوى صاحب كے نزديك يہ بخارى و مسلم ميں ہے ہى نہيں !
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  14. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,484
    [​IMG]
     
  15. اعجاز علی شاہ

    اعجاز علی شاہ -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏اگست 10, 2007
    پیغامات:
    10,324
    عین باجی مذکورہ آرٹیکل کا اشارہ کس کی طرف ہے ؟؟ کیا مبشر لقمان صاحب کی طرف ہے ؟
     
  16. marhaba

    marhaba ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏فروری 5, 2010
    پیغامات:
    1,667
    سیم کویسچن میرا بھی۔۔۔۔۔
     
  17. ابوعکاشہ

    ابوعکاشہ منتظم

    شمولیت:
    ‏اگست 2, 2007
    پیغامات:
    15,455
    میرا خیال ہے کہ مذکورہ آرٹیکل کا اشارہ اینکرز کی طرف ہے ، جو کہ اس تھریڈ کا موضوع ہے ۔
     
  18. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,484
    جی بالکل ۔ فورمر فلم ڈائريكٹر مبشر لقمان
     
  19. علی کے کے

    علی کے کے -: معاون :-

    شمولیت:
    ‏جولائی 29, 2010
    پیغامات:
    68
    یقیناً اسی کی طرف ہے۔ کراچی میں تو اس کی مشہوری کے لئے بڑے بڑے دیوقامت ہورڈنگز لگے ہوئے ہیں، جس سے صاف ظاہر ہوتا ہے کہ اس کے اسپانسرز اور پروموٹرز کا منشاء و منبع کیا ہے۔
    ڈاکٹر اسراراحمد رحمہ اللہ سےکی گئی بدتمیزی والی وڈیو کا لنک اگر کسی کے پاس ہو تو پلیز مہیا کردیں۔
    ویسے ڈاکٹر صاحب سے ایک انٹرویو موصوف نے کیا تھا وہ لنکس میں یہاں مہیا کئے دیتا ہوں۔9پارٹس میں ہے 1۔2۔9میں دے رہا ہوں باقی درمیان والے آپ کو یو ٹیوب کے رائٹ سائیڈ پر ملتے رہیں گے یہاں میں اس لئے شئیر نہیں کررہا کہ پوسٹ خوامخواہ طویل ہوجائیگی۔

    http://youtu.be/7DZQo_yv8is

    http://youtu.be/2f6RHfBNHzA

    http://youtu.be/z9WxIOMw41U
     
  20. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,484
    جزاك الله خيرا ،
    يہ عذاب قبر / آدم عليه السلام / ہابيل قابيل اور قبلہ اول اور اس پر مسلمانوں يا يہوديوں کے حق والی بحث بار بار دہراتا ہے۔ يہ اس كى كوئى نئى دريافت نہيں ہے۔ چبائے ہوئے لقمے ہيں ۔
    فى الوقت قبله اول والى بحث كو زمانه قريب ميں پرويزى سركار كى سرپرستى ميں کہاں سے ہوا دى گئی ؟ اس كے ليے يہ موضوع دیکھیے۔ اصل مضمون كے راوبط بھی اس ميں شامل ہيں ، كوئى بھی انسان دونوں كا غير جانب دارانه مطالعه كر كے رائے قائم كرنے ميں آزاد ہے۔
     
Loading...

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں