چھٹیاں کیسے گذاریں ؟؟؟

ام محمد نے 'مَجلِسُ طُلابِ العِلمِ' میں ‏مارچ 20, 2014 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. ام محمد

    ام محمد -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏فروری 1, 2012
    پیغامات:
    3,122
    السلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ
    پڑھنے اور پڑھانے والوں سے سوال کہ چھٹیوں کو مفید طریقے سے کیسے گذاریں اور مہربانی کر کہ بتا دیں کہ آپ چھٹیاں‌کیسے گذارتے ہیں -چھٹیوں میں‌ کتابوں کو ایک طرف رکھ دیتے ہیں یا زیادہ پڑھتے ہیں کہ فارغ وقت کا ٹھیک استعمال کریں یا کچھ اور کرتے ہیں؟
    ضرور بتائیں تا کہ راہنمائی مل سکے-
     
  2. ساجد تاج

    ساجد تاج -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 24, 2008
    پیغامات:
    38,758
    وعلیکم السلام ورحمتہ اللہ وبرکاتہ

    بہترین طریقہ چُھٹیاں گزارنے کا ملاحظہ کیجیے

    فورا لاہور کی ٹکٹیں کروائی جائیں اور اپنے دینی بہن بھائیوں سے ملا جائے اور دعوتیں لی جائیں ان شاءاللہ بہت اچھی چھٹیاں گزریں گی اور ان چھٹیاں کا پتہ بھی نہیں چلے گا کہ گئی کہاں:00009:
     
  3. ساجد تاج

    ساجد تاج -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 24, 2008
    پیغامات:
    38,758
    لگتا ہے لاہور آنے کا پروگرام فائنل ہو گیا اور ٹکٹیں بھی ہو چُکی ہیں :00006: تبھی کسی کی مزید رائے آنے کا نام نہیں لے رہی ہے
     
  4. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,482
    وعلیکم السلام ورحمۃ اللہ وبرکاتہ
    چھٹیوں کو آرام سے گزارنا چاہیے تاکہ زندگی یکسانیت کا شکار نہ ہو ۔ اگر پڑھائی کرنی ہو تو اس کا وقت کم سے کم مقرر ہونا چاہیے تا کہ آسانی سے گزر جائے : ) عموما ایسی کتابوں کا مطالعہ کیا جا سکتا ہے جن کو پڑھنا آگے آپ کے لیے فائدہ مند ہو ۔اس کے علاوہ جی بھر کے اپنے بھولے بسرے مشغلے تازہ کرنے چاہئیں ۔
     
  5. ام محمد

    ام محمد -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏فروری 1, 2012
    پیغامات:
    3,122
    اچھا مشورہ ہے یعنی جو کتابیں ہم روٹین کی پڑھائی میں نہیں پڑھ سکتے وہ پڑھیں -
    لیکن پڑھائی کی عادت پڑی ہو تو پھر آرام کرنے کو دل نہیں چاہتا -سچ بڑا آرام کر لیا اللہ اب کوئی اچھا کا م کرنے کی توفیق دے -
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  6. ساجد تاج

    ساجد تاج -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 24, 2008
    پیغامات:
    38,758
    آمین

    ویسے سسٹر اگر فارغ میں تھوڑا سا وقت نکال کر کوئی کتاب وغیرہ کمپوز کرتی رہا کریں تو کیسا رہے گا۔ پورے دن میں اگر ایک گھنٹہ کمپوزنگ تو کافی مواد اکٹھا کیا جاسکتا ہے۔ ایک ایسی کتاب جو قرآن و حدیث پر مشتمل ہو جس سے دوسرے اراکین فائدہ اُٹھا سکیں اور اگر کوئی عمل کرتا ہے تو کتنا اجر ملے گا اس کا ، اور ایک طرح سے یہ صدقہ جاریہ بھی بن جائے گا
     
  7. ام محمد

    ام محمد -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏فروری 1, 2012
    پیغامات:
    3,122
    جزاک اللہ خٰرا اچھا مشورہ ہے-
    ان شاء اللہ ،ارادہ ہے دعا کیجیے گااللہ مدد فرمائے-
     
  8. ام ثوبان

    ام ثوبان رحمہا اللہ

    شمولیت:
    ‏فروری 14, 2012
    پیغامات:
    6,692
    آمین یارب العالمین
    اللہ هم سے زیادہ سے زیادہ دین کا کام لے آمین
     
  9. ساجد تاج

    ساجد تاج -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 24, 2008
    پیغامات:
    38,758
    آمین
     
  10. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,482
    ایک بڑا کام یہ ہے کہ آپ اپنے بچوں کو وقت دیں۔ پتہ نہیں کیوں ٹین ایج میں والدین اور بچوں میں فاصلے آ جاتے ہیں ۔
     
  11. ابن قاسم

    ابن قاسم محسن

    شمولیت:
    ‏اگست 8, 2011
    پیغامات:
    1,719
    چھٹیاں ایسے گزاریں ۔۔۔ یہ سونچتے سوچتے امتحان طے ہوتے ہیں پھر چھٹیاں ایسے ہی گزرجاتی ہیں۔
     
  12. ابن قاسم

    ابن قاسم محسن

    شمولیت:
    ‏اگست 8, 2011
    پیغامات:
    1,719
    چھٹیوں میں وقت کم ہوتا ہے اور مصروفیات زیادہ!! اس لیے سوچنے میں‌وقت ضایع نہیں‌ کرنا چاہیے۔
    کتابیں زیادہ پڑھی جاتی ہیں۔ اور جو چیزیں امتحانات کے دوران نہیں سمجھ آتی وہ چھٹیوں میں آتی ہیں۔
     
  13. ام محمد

    ام محمد -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏فروری 1, 2012
    پیغامات:
    3,122
    سسٹر اب بچے ہمیں ٹائم دیں تو بڑی بات ہے ان کی اپنی مصروفیات ہیں.
     
  14. ساجد تاج

    ساجد تاج -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 24, 2008
    پیغامات:
    38,758
    بچوں کے کان کھینچ کر انہیں سیدھا کرنے میں یہ چھٹیاں اب گزارنی چاہیے :00006:
     
  15. ام محمد

    ام محمد -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏فروری 1, 2012
    پیغامات:
    3,122
    جزاکم اللہ خیرا
    ہمیں سکھایا گیا کہ چھٹیوں کا مطلب زیادہ کام -یہاں کام کرنا ہےاور جنت میں ان شاء اللہ آرام کرنا ہے-
    اور میرے خیال میں چھٹیوں کا وقت ہمارا اپنا ہوتا ہے اور اس کا بہترین استعمال یہ ہے کہ روٹین کی پڑہائی کے دوران جو کمی رہ جاتی ہے اس کو پورا کیا جائے اور پڑھا ہو اس کو بھی کچھ دھرا ضرور لیا جائےاور پڑ ھائی کے دوران جو روٹین کے کاموں میں کمی ہوتی ہے ان کو پورا کیا جائے تاکہ چھٹیوں کے بعد کام کا زیادہ بوجھ نہ ہو-
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  16. ساجد تاج

    ساجد تاج -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 24, 2008
    پیغامات:
    38,758
    ہمممممممممممم بہترین
     
  17. ام محمد

    ام محمد -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏فروری 1, 2012
    پیغامات:
    3,122
    اور پهر چهٹیاں .....ہوم ورک کے ساته
     

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں