آئنو جب کوئی تصویر دکھانا اب کے

azharm نے 'شعری مجلس' میں ‏مارچ 31, 2014 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. azharm

    azharm -: مشاق :-

    شمولیت:
    ‏مئی 28, 2012
    پیغامات:
    449

    آئنو جب کوئی تصویر دکھانا اب کے
    اصل چہرہ بھی ذرا سامنے لانا اب کے

    اور کیا، دے ہی چکے ہو جو اندھیرے کو شکست
    ایک لحظہ کو سہی جوت جگانا اب کے

    جو بھی آئے ہے خریدے تُجھے ایرا غیرا
    گر چکا ہے ترا بھاؤ، یہ اُٹھانا اب کے

    دور ہو زلف رسا کی یہ پریشانی کچھ
    اس کو سُلجھاؤ تو پھر گُل سے سجانا اب کے

    اب کے منجدھار میں پتوار کھوئیے چھوڑو
    وقت پر بنتی ہے کیا، سیکھے زمانہ اب کے

    چھوڑ دینا کوئی کھڑکی، کوئی دروازہ کھُلا
    گھر مرے دل میں گھٹا تُو جو بنانا ابے اب کے

    میری توبہ جو محبت میں کروں پھر اظہر
    بس ہے اتنی سی ہی خواہش کہ بچانا اب کے
     
  2. ساجد تاج

    ساجد تاج -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 24, 2008
    پیغامات:
    38,758
    بہت خوب بھائی
     

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں