حرمت والے مہینے نیک اعمال کے موسم

عائشہ نے 'اسلامی مہینے' میں ‏مئی 1, 2015 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,168
    حرمت والے مہینے نیک اعمال کے بہترین دن بلکہ موسم بہار ہیں اگر ہمارے معمولات ان دنوں میں بھی نہیں بدلتے تو کب بدلیں گے؟
    کیا اس موضوع میں آپ بتانا پسند کریں گے کہ حرمت والے مہینوں میں ہم کس طرح گناہوں سے بچ سکتے ہیں اور نیک اعمال کر سکتے ہیں۔ ہو سکتا ہے آپ کے الفاظ کسی انسان کی ہدایت کا سبب بن جائیں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 5
  2. ام محمد

    ام محمد -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏فروری 1, 2012
    پیغامات:
    3,123
    جزاک اللہ خیرا
    مجهے یادآیا اس پر ہماری ایک ٹیچر نے درس دیا تها.انهوں نے کہا تها کہ رمضان کی تیاری اس مہینے ہی سے شروع کر دیں .
    تهجد میں اٹهنے کی کوشس کریں تاکہ سحری میں اتهنا آسان ہو.نوافل دو سے شروع کر کے اس کی تعداد بڑهاتے جائیں .قرآن پاک کی تلاوت بهی تهوڑے سے شروع کرکے اس کی مقدار بهی بڑهاتے جائیں اور صدقہ خیرات بهی کریں .یاد نہیں انهوں نے روزے کا کہا تها کہ نہیں لیکن میرے خیال میں روزے بهی رکهنے چاہیے اللہ ہمیں سب نیک اعمال کی توفیق دے آمین یا رب.
    اور کسی نے یہ بهی کہا تها کہ ان حرمت والے مہینوں میں خاص لڑائی جهگڑے سے بچنا ہے اور گهر والوں اور خاص کر بچوں کے ساته نرمی کا معاملہ کرنا ہے .

    اللہ سے دعا ہے کہ اللہ ہمیں بالکل ویسا مسلمان اور مومن بنا دے جیسا اسکو پسند ہے .ہم رحمن کے بندے بنیں اور شیطانی وسوسوں سے محفوظ رہیں.آمین یا الرحم الراحمین
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 4
  3. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,168
    ماشاء اللہ بہت خوب۔ جزاک اللہ خیرا۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  4. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,168
    کچھ چیزیں جو میرے خیال میں بہت آسان عبادات ہیں۔ ان مہینوں میں اگر ہم نفلی نماز اور روزوں کا اہتمام نہیں کر سکتے توذکر، استغفار، توبہ اور صدقہ کرسکتے ہیں جو بالکل خاموشی سے ہو سکتی ہیں لیکن انسان کی روحانی صحت پر بہت خوش گوار اثر ڈالتی ہیں۔
    صبح وشام کے فرض اذکار میں، فرض نمازوں کے بعد چپکے سے استغفار بڑھا دیں۔ اس کے لیے مصلے پر بیٹھا رہنا ضروی نہیں چلتے پھرتے ہو سکتی ہے۔
    اسی طرح ذکراللہ کی عبادت عام کاموں کے دوران بھی ہو سکتی ہے۔ نئی دعائیں یاد کر لیں۔ نئی سورتیں حفظ کر لیں اس سے نماز میں تازہ لطف آئے گا۔
    صدقے کے لیے بہت سے پیسے نہیں چاہئیں نہ ہی غریبوں کو ڈھونڈنے جانا ہے۔ صدقہ اپنوں پر سب سے پہلے ہوتا ہے۔وہ لقمہ جو آدمی اپنے گھروالوں کو کھلاتا ہے وہ بھی صدقہ ہے، لوگوں سے مسکرا کر ملنا بھی صدقہ ہے، اپنے بھائی کی ضرورت پوری کر کے اس کو خوش کر دینا بھی صدقہ ہے، راستے سے تکلیف دہ چیز ہٹا دینا بھی صدقہ ہے، لوگوں کی نیکی کی طرف بلانا اور برائی سے روکنا بھی صدقہ ہے۔ اپنے بچوں اور گھر والوں کو برائی سے روکنا آپ پر فرض ہے۔ ورنہ چھوٹی چھوٹی برائیاں بڑے عفریت بن کر گھروں کے سکون نگل جاتی ہیں۔ گھر میں حلال تفریح کو رواج دیں۔ ناچ گانے کی حرام تفریح کو نکال دیں۔
    لوگوں کے حقوق آپ کے ذمے ہیں تو جلد دے دیں اس سے پہلے کہ موت ہم سے وہ اختیارات ہی چھین لے۔
    ان مہینوں میں گناہوں سے بچنا بھی فرض ہے تو ہم ان گناہوں سے باہر نکلنے کی کوشش کر سکتے ہیں جن میں ہم برسوں سے پڑے ہیں اور وہ ہماری عادت بن چکے ہیں۔ اس سے پہلے کہ وہ ہماری آخرت خراب کر دیں ہمیں ان سے جان چھڑانی ہے۔ اس کابہترین طریقہ توبہ ہے۔ اس بابرکت وقت میں ہم سب کو توبہ کر کے اللہ سے دین پر ثابت قدمی مانگ لینی چاہیے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 3
  5. ام محمد

    ام محمد -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏فروری 1, 2012
    پیغامات:
    3,123
    جزاک اللہ خیرا
    اللہ تعالی عمل کی توفیق دےبآمین یا رب
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 2
  6. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,168
    وایاک آمین۔
    آج کل ذوالقعدہ کا مہینہ ہے یہ بھی حرمت والے مہینوں میں سے ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
Loading...

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں