کیا اس ماہ رمضان کی پندرہ تاریخ یعنی جمعہ کی رات کو سب ہلاک ہو جائیں گے ؟؟

عبدالرحیم نے 'ضعیف اور موضوع احادیث' میں ‏جون 29, 2015 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. عبدالرحیم

    عبدالرحیم -: ماہر :-

    شمولیت:
    ‏جنوری 22, 2012
    پیغامات:
    949
    نہیں یہ من گھڑت (جھوٹی) حدیث جو بدعتی علماء پھیلا رھے ھیں.
    ◆◆◆◆◆◆◆◆◆◆◆◆◆◆◆◆◆◆◆◆◆◆◆◆◆◆

    " يكون في رمضان صوت..." ماہ رمضان میں ایک آواز ہوگی'پوچھا گیا یہ آواز شروع عشرہ میں ہوگی؟یا درمیانی عشرہ میں یا پھر اخیر کے عشرہ میں؟
    آپ نے فرمایا نہیں بلکہ پندرہویں رمضان میں'جس میں جمعہ کی رات ہوگی'آسمان سے ایک آواز آئیگی جس سے ستر ہزار لوگ بے ہوش جا ئین گے'اور ستر ہزار لوگ گونگے اور ستر ہزار اندھے اور اتنے ہی لوگ بہرے ہو جائنگے'صحابہ نے پوچھا تو اس سے کون بچے گا؟
    آپ نے فرمایا:جو اپنے گھر کو لازم پکڑےگا'اور سجدے میں گر کر اللہ کی پناہ مانگے گا'اور بلند آواز سے تکبیر کہے گا'پھر اس کے بعد ایک اور آواز آئیگی'پہلی آواز جبیریل کی ہوگی جبکہ دوسری شیطان کی ہوگی......الحدیث بطولہ
    حدیث کی مختصر تخریج:
    یہ حدیث موضوع ہے(الضعیفہ للالبانی 13/397-398)
    اس کو طبرانی نے "المعجم الکبیر"28/332/854) میں اور ابن الجوزی نے اسی طریق سے "الموضوعات"3/191 میں روایت کی ہے.
    ۱-اس روایت کی سند میں"عبد الوھاب بن الضحاک"نامی راوی ہے جس کے بارے ائمہ جرح وتعدیل نے سخت کلام کیا ہے'امام عقیلی کہتے ہیں یہ حدیث چوری کرتا تھا اس سے دلیل لینا صحیح نہیں"
    دار قطنی نے اسے منکر الحدیث کہا ہے.
    ۲-اسماعیل بن عیاش کو بھی ابن الجوزی "ضعیف"کہا(اگرچہ شیخ البانی نے اسے بری قرار دیا ہے اس لئے کہ وہ اس حدیث کو شاوالوں سے روایت کر رہے ہیں'اور بذاتہ ثقہ راوی ہین)
    ۳-ابن الجوزی کہتے ہیں "عبدہ بن ابی لیلہ"نے فیروز الدیلمی کو نہیں دیکھا اور فیروز نے آپ صلی اللہ علیہ وسلم کی دیدار نہیں کی.
    تفصیل کے لئے دیکھئے(الضعیفہ 13/397
    ومجمع الزوائد للهيثمي 7/310)
    اسی مذکورہ حدیث کو ایک دوسرے طریق سے ابو عمرو الدانی نے"الفتن" (5/969/518)میں روایت کیا ہے
    شیخ البانی کہتے ہیں یہ سند بھی ناقابل حجت ہے
    اس لئے کہ اس میں"خالد بن سلام"مجھول راوی ہے.
    جبکہ یحی الدھنی کے نام سے میں کسی کو نہیں جانتا بلکہ بہت ممکن ہے اس سے مراد"یحی بن سعید العطار"ہے جو ضعیف ہے(الضعیفہ)
    اسی حدیث کو ابو عمرو الدانی اپنی کتاب"الفتن"میں موقوفا بھی روایت کیا ہے.
    اس پر مستزاد یہ کہ اس کی سند میں"خالد بن سلام"اور"یحی"ہے.
    نیز اس کی سند میں"حجاج"نامی راوی بھی ہے احتمال ہے کہ اس سے مراد "حجاج بن ارطاہ"ہے جو مدلس راوی ہے(الضعیفہ)
    اسی طرح "احوص عن کثیر"کے تعلق سے شیخ البانی اپنی لا علمی کا اظہار کرتے ہیں(تفصیل کے دیکھئے الضعیفہ 13/397-398 ومجمع الزوائد 7/310)
    (ابو تقي الدين ضياء الحق بن سيف الدين البخار)
     
    Last edited by a moderator: ‏جولائی 5, 2015
    • پسندیدہ پسندیدہ x 6
  2. محمد عامر یونس

    محمد عامر یونس محسن

    شمولیت:
    ‏مارچ 3, 2014
    پیغامات:
    901
    جزاک اللہ خیرا - آج کل لوگوں کے موبائل پر اس میسج کو بہت عام کیا جا رہا ہے
     
  3. ام محمد

    ام محمد -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏فروری 1, 2012
    پیغامات:
    3,122
    انا للہ وانا الیہ راجعون
    اللہ تعالی فتنے پهیلانے والی خبروں سے محفوظ رکهے آمین یا رب
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  4. بنت امجد

    بنت امجد -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏فروری 6, 2013
    پیغامات:
    1,568
    آمین یا رب العالمین
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  5. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,485
    لاحول ولاقوۃ الا باللہ
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  6. حسیب رزاق

    حسیب رزاق -: معاون :-

    شمولیت:
    ‏فروری 8, 2013
    پیغامات:
    103
    اس کے بارے میں بھی کچھ بتا دیں

    مسئلہ ۲: مرسلہ جناب خلیل صاحب سوداگر ۔ کٹرہ مانسرائے بریلی۔

    کیا فرماتے ہیں علمائے دین اس مسئلہ میں کہ جمعہ کو رمضان المبارك میں کوئی ہیبت ناك بات آنے والی ہے جس کی نسبت حضور کی طرف بعض آدمیوں نے کی ہے کہ مولوی صاحب نے ایسا فرمایا کہ جمعہ کی رات کو ایك ہیبت ناك آواز آئے گی۔ بیّنوا توجروا ( بیان فرمائیے اجر دیئے جاؤ گے ۔ت)

    الجواب :

    آئے گی مگر یہ نہ کہا تھا کہ اسی رمصان آئے گی۔ جب آئے گی تو وہ رمضان ہی ہوگا جس کی پندرھویں جمعہ کو ہوگی۔ اس سال زلزلے کثرت سے ہوں گے۔ اَولے کثرت سے پڑیں گے۔ پندرھویں شبِ رمضان شب جمعہ ایك دھماکہ ہوگا صبح کی نماز کے بعد ایك چنگھاڑ سنائی دے گی۔ حدیث میں آیا کہ اس تاریخ کو نمازِ صبح پڑھ کر گھروں کے اندر داخل ہوجاؤ اور کواڑ بند کرلو۔ گھر میں جتنے روزن ہوں بند کرلو۔ کان بند کرلو۔ پھرآواز سنو تو فورًا الله عزوجل کے لیے سجدہ میں گر و اورکہو"سبحٰن القدوس سبحٰن القدوس ربنا القدوس"(قدوس کے لیے پاکی ہے قدوس کے لیے پاکی ہے اور ہمارا پروردگار قدوس ہے۔ت) جو ایسا کرے گا نجات پائے گا جو نہ کرے گا ہلاك ہوگا[1]۔

    یہ حدیث کا مضمون ہے۔ اس میں یہ تعیین نہیں کہ کس سنہ میں ایسا ہوگا۔ بہت رمضان گزر گئے جن کی پہلی جمعہ کو تھی اوران شاء الله تعالٰی آئندہ بھی گزریں گے۔ ہاں جو خبر دی ہے ہونے والی ضرور ہے جب کبھی ہو۔ الله تعالٰی سے خوف و امید ہر وقت رکھنا چاہیے۔ والله تعالٰی اعلم۔

    حاشیہ میں یہ حوالہ درج ہے

    مسند الشاشی حدیث ۸۳۷مکتبۃ العلوم والحکیم مدینہ منورہ ۲/ ۲۶۲ و۲۶۳
     
    Last edited by a moderator: ‏جولائی 3, 2015
  7. ابوعکاشہ

    ابوعکاشہ منتظم

    شمولیت:
    ‏اگست 2, 2007
    پیغامات:
    15,440
    کوئی ہلاک تو نہیں ہوا ـ ملفوظات احمد رضا بریلوی میں سے کچھ مزید پیش گوئیاں دفن ہو گئیں الحمد للہ
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 2
  8. محمد عامر یونس

    محمد عامر یونس محسن

    شمولیت:
    ‏مارچ 3, 2014
    پیغامات:
    901
    بریلوی لوگ اب کہہ رہے ہیں کہ ضروری نہیں کے اسی سال جمعہ 15 رمضان کو ہوتا یہ تو کسی بھی سال 15 رمضان بروز جمعہ میں ہو سکتا ہے
     
Loading...

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں