عاداك من حسدِ(جو حسد کی بنیاد پر دشمنی رکھے)

ابوعکاشہ نے 'عربی علوم' میں ‏اگست 16, 2015 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. ابوعکاشہ

    ابوعکاشہ منتظم

    شمولیت:
    ‏اگست 2, 2007
    پیغامات:
    14,165
    كل العداواة قد ترجى مودتها
    إلا عداوة من عاداك من حسدِ

    ہرعداوت کے بعد محبت کی امید کی جاسکتی ہے
    سوائے اس عداوت کے جسکی بنیاد حسد پر قائم ہے
    (امام شافعی )
    حسد بدترین جرم،ناقابل علاج مرض اور حسنات کو کھا جانے والا مہلک ترین گناہ ہے ـ حاسد حسد کرکے دنیوی ہلاکتی کا نیز تقدیر خداوندی پر اعتراض کر کے ،اخروی گرفت کا بھی مستحق بن جاتا ہے ـ حسد حاسد کو حق تلفی ،دشمنی ،آبرو ریزی حتی کے قتل وٖ غارت گری جیسے جرائم تک پہنچا دیتا ہے ـ پھر یہ عداوت چونکہ بے جا اور بلاوجہ ہوتی ہے ـ کبھی بھی ختم ہونیکا نام نہیں لیتی ـ یہاں تک کہ نسل در نسل اس کا سلسلہ جاری رہتا ہے ـ
    یہود کی حسد کی بنیاد پر مسلمانوں سے ہونے والی عداوت کو قرآن کریم نےلتجدن أشد الناس عداوة للذين آمنوا اليهودا (المائدہ) سے تعبیر کیا ہے ـ جو فی الواقع نہ آج سے پہلے ختم ہوئی ـ نہ آج ختم ہونیکا نام لیتی ہے ـ نہ آج کے بعد ختم ہونیکے آثار نظرآتے ہیں کیونکہ اس کی بنیاد ہی حسد و کینہ پر ہے
    حسد کی اسی ہلاکت خیزی کی وجہ سے حسد کو"داء اﻷﻣﻢ ﻗﺒﻠﮑﻢ. کہ کر اگلی امتوں یعی یہود کی طرف منسوب کیاگیا ہے ـ ایک حدیث شریف کا مضمون ہے:
    "دب اليكم داء الامم قبلكم، الحسد والبغضاء، والبغضاء هي الحالقة، لا أقول تحلق الشعر ولكن تحلق الدين، (رواہ احمد والترمذی،حسن لغيره )
    امام شافعی نے مذکورہ شعر میں اسی حقیقت کی ترجمانی کرتے ہوئے فرمایا کہ جملہ اسباب کی بنیاد پر ہونے والی عدوتوں میں صلح وآشتی کی امیدیں کی جاسکتی ہے ـ مگر حسد کی وجہ سے ہونے والی عداوت میں نہیں ـ اور وہ اس لئے کہ حسدمیں حاسد کی عداوت کا ـ نفس کی جلن کے سوا دوسرا کوئی ایسا معقول سبب نہیں هوتا ـ جس کو زائل کرکے عداوت کو محبت میں تبدیل کردیا جائے ـ اور ایسی عداوت کو ، جو محض جلن کی وجہ سے ہو دور کرنا ناممکن ہوتا ہے ـ ایسے ہی سبب کی بنیاد پر ایک حدیث میں بدظنی کو "اکذب الحدیث"کہا گیا ہے ہے ـ
    الغرض ایک مومن کو گناہ کبیرہ کی فہرست میں شامل ، اس وبا سے حتی الامکان پرہیز کرنا چاہیے اور حدیث کی رو سے دل میں پیدا ہونے والے وقتی وسوسہ کو بھی فوری طورپر سختی سے دور کرددینا چاہیے ـ

    ترجمہ :مولانا عبداللہ کاپودروی
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 6
Loading...

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں