قرآن کریم دنیا کی قدیم ترین مستند کتاب

ابو ابراهيم نے 'اسلامی متفرقات' میں ‏نومبر 22, 2016 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. ابو ابراهيم

    ابو ابراهيم -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏مئی 11, 2009
    پیغامات:
    3,873
    قرآن کریم دنیا کی قدیم ترین مستند کتاب

    مقدس کتاب کا اصل نسخہ فی الوقت موجود نہيں٬ مقدس کتابوں ميں واحد صحيح کتاب قرآن پاک کے سوا کوئی نہيں
    ڈاکڻر محمد لئيق الله خان۔ جده
    يہ دعو ٰی ادنی ہچکچاہٹ اور ترديد کے معمولی خوف کے بغير پورے وثوق و اعتماد کے ساته کيا جاسکتا ہے کہ پوری دنيا ميں قديم ترين واحد کتاب قرآن کريم ہے جس کا ہر نسخہ ٬ ہر طرح سے ديگر تمام نسخوں کے عين مطابق ہے۔ قرآن کے سوا کسی بهی قديم کتاب کی بابت ايسا دعو ٰی نہيں کيا جاسکتا۔ قرآن پاک کے قلمی نسخوں ميں حيرت انگيز مطابقت قرآن کريم کے قلمی نسخوں کا گہرائی اور گيرائی سے مطالعہ کيجئے۔ قرآن پاک کے قلمی نسخے دنيا بهر ميں ہزاروں کی تعداد ميں محفوظ ہيں۔ آپ کو تمام نسخے حيرت انگيز حد تک يکساں مليں گے۔ بعض نسخوں ميں چند حروف مختلف ملتے ہيں جن سے آيت کے معنی نہيں بدلتے بلکہ ان سے معنی کو چار چاند لگ جاتے ہيں۔ قرآن پاک پر اعتراضات کرنے والے مخالفين اور مستشرقين نے قرآن کے نسخوں ميں تضادات اور فرق کا سراغ لگانے کی سرتوڑ کوششيں کيں ليکن انہيں قرآن پاک کے رائج الوقت کسی بهی نسخے سے مختلف کوئی نسخہ دنيا کے کسی حصے ميں نہيں ملا۔ الله تبارک و تعالی نے سوره الحجر کی آيت نمبر9ميں يہ اعلان کيا ہے يہ ذکر ہم نے ہی نازل کيا ہے اور ہم ہی اسکے نگہبان ہيں۔ چونکہ الله تعالی نے قرآن پاک کی حفاظت کا عہد ليا ہے لہذا قرآن پاک کے تمام نسخوں ميں يکسانيت ضروری ہے۔ زمينی حقيقت بهی يہی ہے۔ الله تعالی کا انکار کرنے والوں اور اسلام ميں کيڑے نکالنے والوں نے قرآن پاک ميں ردوبدل کا ثبوت حاصل کرنے کے لئے انتهک جدوجہد کی تاہم کسی کو ايک بهی دليل ايسی نہ مل سکی جس کو بنياد بناکر وه قرآن پاک ميں ردوبدل کے دعوے کو سچ ثابت کرسکيں۔ آخر کار ان لوگوں نے اپنی بهڑاس نکالنے کيلئے من گهڑت اور ضعيف احاديث نيز تفسير کی کتابوں ميں مذکور اسرائيلی قصوں اور خود ساختہ کہانيوں کا سہارا ليا۔ ان لوگوں نے قرآن پاک ميں تحريف کاد عو ٰی درست ثابت کرنے کيلئے اس قسم کی لچر باتوں کو بنياد بنايا ليکن ان کی يہ کاوشيں بهی بے معنی ثابت ہوئيں۔ کوئی بهی ذی ہوش انسان يہ ماننے پرآماده نہيں ہوا کہ قرآن پاک ميں کسی قسم کا کوئی ردوبدل ہواہے۔ الفرقان الحق کے نام سے مسلم دشمنوں نے نيا قرآن ايجاد کيا ہے۔ دشمنوں نے اس کی تياری پر کروڑوں ڈالر خرچ کئے۔ الفرقان الحق’’ مسلمانوں کے ذہنوں ميں قرآن پاک کی صداقت کو مشکوک کرنے کی عصری شيطانی کوشش ہے۔ يہ کوشش بهی بری طرح سے ناکام ہوگئی ہے۔‘‘ کروڑوں ڈالر خرچ کرکے اس کے نسخے چهپوائے گئے اور اسے عام کرنے کی کوشش کی گئی ليکن کہيں بهی اس کو پذيرائی نہيں ملی۔ جن لوگوں نے ‘‘الفرقان الحق’’ نامی کتاب کا مطالعہ کيا ہے ٬وه کہتے ہيں کہ يہ غلطيوں اور تضادات کا مجموعہ ہے۔ بہتر ہوتا کہ اسکا نام ‘‘الفرقان الحق’’ کے بجائے‘‘ مضحکہ خيز کتاب’’ رکها جاتا کہ يہی وصف اس پر صحيح معنوں ميں صادق آتا ہے۔ کوئی بهی عقل مند انسان اس کی صداقت پر توجہ دينے کيلئے آماده نہيں۔ الله تبارک و تعالی نے سورة البقره کی آيت نمبر 23اور 24ميں چيلنج ديا ہے کہ کوئی بهی انسان قرآن پاک جيسی کتاب تخليق نہيں کرسکتا٬ارشاد الہی کا مفہوم ہے اور اگر تمہيں اس امر ميں شک ہے کہ يہ کتاب جو ہم نے اپنے بندے پر نازل کی ہے يہ ہماری ہے يا نہيں تو اسکے مانند ايک ہی سورت بنالاؤ اپنے سارے ہمنواؤں کو بلالو ايک الله کو چهوڑ کر باقی جس جس کی مد د چاہو لے لو٬ اگر تم سچے ہو تو يہ کام کرکے دکهاؤ ليکن اگر تم نے ايسا نہ کيا اور يقينا کبهی ايسا کر بهی نہيں سکتے تو اس آگ سے ڈرو جسکا ايندهن انسان اور پتهر بنيں گے جو منکرين حق کے لئے تيار کی گئی ہے۔ الله تعالی کا کمال ديکهيں کہ قرآن پاک ميں شکوک و شبہات پيدا کرنے والے انجانے ميں خود قرآن پاک کی خدمت کررہے ہيں۔ قرآن سينوں ميں محفوظ رہنے والی واحد کتاب قرآن پاک سينوں ميں محفوظ رہنے والی واحد کتاب ہے۔ لاکهوں مرد ٬ خواتين ٬ بچے اور نوجوان مشرق و مغرب اور شمال و جنوب دنيا کے ہر خطے ميں قرآن پاک کے حافظ ہيں۔ ايک بار قرآن پاک حفظ کرکے زندگی بهر ياد رکهتے ہيں۔ آپ قرآن کے علاوه کسی بهی مذہبی کتاب کی بابت کسی بهی مذہب کے پيشوا سے دريافت کرليجئے کہ کيا آپ کی مذہبی کتاب آپ کے کسی پيرو کار يا کسی مذہبی پيشوا کو زبانی ياد ہے؟ يقين جانيں کہ اس کا جواب آپ کو نفی ميں ہی ملے گا۔ عجيب و غريب بات يہ ہے کہ کوئی بهی غير مسلم مذہبی پيشوا اپنی مذہبی کتاب کے حافظ ہونے کا دعو ٰی نہيں کرتا۔ دراصل ساده سی بات يہ ہے کہ کوئی بهی مذہبی پيشوا اپنی مذہبی کتاب کو حفظ کرنے کی ضرورت ہی محسوس نہيں کرتا جبکہ مسلمان قرآن کريم حفظ کرنے کو محبوب اور عظيم ترين عمل سمجهتے ہيں۔ فی الوقت دنيا ميں قرآن پاک کے ہزاروں نسخے پائے جاتے ہيں۔ يہ سب ايک جيسے ہيں۔ بعض الفاظ کے نقش يا رسم الخط يا صفحے کے حجم ميں معمولی سا فرق مل سکتاہے تاہم الفاظ سارے نسخوں ميں ايک ہی ہوتے ہيں تمام نسخوں ميں لغوی معنی بهی ايک ہی رہتے ہيں۔ ايسا لگتا ہے کہ سورة الحجر کی آيت نمبر 9) انا نحن نزلنا الذکر و انا لہ لحافظون) کے ايک معنی يہ بهی ہيں کہ قرآن پاک سينوں ميں بهی محفوظ ہوگا اور اوراق ميں بهی۔ قرآن اپنے نزول کے وقت سے ليکر پوری طرح سے محفوظ ہے اور قيامت آنے تک محفوظ رہے گا۔سوال يہ ہے کہ کيا ديگر آسمانی کتابيں بهی قرآن کريم کی طرح محفوظ اور تحريف سے پاک ہيں؟ مقدس کتاب کا کيا حال ہے؟ ماہرين اور اسکالرز اس حوالے سے کيا کہتے ہيں؟ اس سلسلے کی تازه تحقيق کيا ہے؟ مغربی دنيا کے ماہرين بلکہ خود انکے مذہبی پيشوا بهی اب يہ بات تسليم کرنے لگے ہيں کہ مقدس کتاب ميں تحريف ہوچکی ہے۔ گزشتہ صديوں کے دوران اس ميں بہت ساری ترميميں کی گئی ہيں۔ مقدس کتاب کے قديم قلمی نسخوں پر تحقيقی کام کرنے والے بعض اسکالرز نے ايک بيان ديا ہے جو بی بی سی لندن سے نشر ہوا ہے۔ اس ميں تسليم کيا گيا ہے کہ مقدس کتاب کے نسخوں ميں مختلف ادوار ميں بهاری اختلافات پيدا ہوئے ہيں۔ مقدس کتاب کے 2قلمی نسخے ايک جيسے نہيں ملتے۔ ڈيوڈ پارکر قلمی نسخوں کے ماہر سمجهے جاتے ہيں۔ وه کہتے ہيں کہ ہميں يہ بات پيش نظر رکهنی چاہئے کہ مقدس کتاب اصل حالت ميں نہيں ۔ يہ نسل در نسل بدلتی رہی ہے ۔ يہ الله تعالی سے متعلق لوگوں کے خيالات کو سمجهنے کی کوششوں کا نتيجہ ہے۔مقدس کتاب کا 160برس قبل دريافت ہونے والا قلمی نسخہ انڻرنيٹ پر پيش کيا گيا ہے ٬جو شخص بهی چاہے اس کی ورق گردانی کرسکتا ہے۔ يہ‘‘سينا ء’’ کے نام سے معروف ہے۔ يہ 1500برس قبل پرانا نسخہ ہے٬ اسے اسلام کی آمد سے قبل تحرير کيا گيا تها۔ يہ نسخہ نئی انجيل سے يکسر مختلف ہے۔ اس ميں جو معلومات درج ہيں وه جديد انجيل سے الگ ہيں۔ مقدس کتاب کے نسخوں ميں موجود اختلافات کی بهرمار اس بات کا ثبوت ہے کہ يہ الله کی نہيں بلکہ غير الله کی کتاب ہے۔ اس ميں تحريف ہوچکی ہے۔حق اور سچ يہی ہے کہ مقدس کتاب کا اصل نسخہ فی الوقت موجود نہيں۔ مقدس کتابوں ميں واحد صحيح کتاب قرآن پاک کے سوا کوئی نہيں۔ تردد اور حيرت و استعجاب ميں مبتلا انسانوں کو قرآن پاک سے ہی روشنی لينا ضروری ہے کہ کتاب حق اس کے سوا کوئی نہيں۔

    بشكريه اردو نيوز جده​
     
    • اعلی اعلی x 3
  2. بابر تنویر

    بابر تنویر منتظم

    رکن انتظامیہ

    شمولیت:
    ‏دسمبر 20, 2010
    پیغامات:
    7,313
    جزاک اللہ خیرا شیخ ابو ابراھیم
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں