فوت شدہ لوگ قبر پر آنے والوں کو عریاں دیکھتے ہیں {جھوٹی روایت}

عائشہ نے 'ضعیف اور موضوع احادیث' میں ‏جنوری 13, 2017 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,485
    آج کسی نے سوال کیا کہ بعض لوگ کہتے ہیں حدیث میں آیا ہے کہ فوت شدہ لوگ قبر پر آنے والوں کو عریاں حالت میں دیکھتے ہیں۔ اس لیے عورتوں کو قبرستان جانا منع ہے۔
    اسلام میں خواتین کو کبھی کبھار قبرستان جانے کی اجازت ہے اس شرط کے ساتھ کہ وہ اسلامی لباس اور آداب کا خیال رکھیں۔ جس کی تفصیل یہاں ذکر ہو چکی ہے۔ اب سوال یہ ہے کہ کیا ایسی کوئی حدیث ہے کہ فوت شدہ لوگ قبر پر آنے والوں کو عریاں دیکھتے ہیں؟
    اول : ایسی کوئی حدیث شریف حدیث کے کسی قابل ذکر مصدر (سورس) میں درج نہیں ۔ایسا دعوی کرنے والوں کو حوالہ دینا واجب ہے۔
    دوم: اگر یہ بات درست ہوتی تو مردوں کا بھی قبر پر جانا منع ہوتا کیوں کہ شریعت اسلامیہ نے مردوں اور عورتوں دونوں کے لیے بدن کا پردہ فرض کیا ہے۔ پیارے نبی حضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: لا ينظر الرجل إلى عورة الرجل ولا تنظر المرأة إلى عورة المرأة ترجمہ: کوئی مرد کسی مردکے ستر کو نہ دیکھے اور کوئی عورت کسی عورت کے ستر کو نہ دیکھے۔ (صحیح مسلم) یاد رہے کہ عورتوں کا پورا جسم ستر ہے اور مردوں کا ستر ناف سے گھٹنے تک ہے۔واللہ اعلم
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 3
Loading...

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں