رمضان المبارک کے لوازمات

ام اقصمہ نے 'کچن کارنر' میں ‏جون 25, 2008 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. ام اقصمہ

    ام اقصمہ -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 7, 2007
    پیغامات:
    3,893
    [​IMG]
    السلام علیکم ورحمتہ اللہ وبرکاتہ

    آج 20 جمادی الثانی بمطابق 1429 ھ ہے ۔اگلےدو مہینوں کے پھر رمضان المبارک کا مہینہ شروع ہو جائے گا ۔ اس مہینہ کی مطابقت سے میں نے سوچا کے ایک دھاگہ شروع کیا جائے جس میں‌وہ تمام لوازمات جن کا اہتمام افطار و سحری کے وقت کیا جاتا ہے تحریر کئے جایئں ۔ اگر آپ کے پاس بھی سحری اور افطاری کے کے لوازمات کی تراکیب ہیں تو یہاں‌ضرور شئیر کریں ۔

    سب سے پہلے میں بھجیئوں کی ترکیب لگاؤنگی ۔حیران ہونے کی کوئی ضرورت نہیں‌ہے ایک خاص قسم کے پکوڑوں کو بھجیئے کہا جاتا ہے ۔:00005:

    بھجیئوں کے لیئے اجزاء نوٹ فرمایئں :

    بیسن : ایک پاؤ
    پالک : آدھی گڈی ،( صاف کرکے باریک کتری ہوئی )
    پیاز : ایک بڑے سائز کی چاپ کی ہوئی
    ادرک: آدھا انچ کا ٹکڑا ( بلکل باریک چاپ کیا ہوا)
    ہلدی : آدھا چائے کا چمچہ
    نمک ، سرخ مرچ َحسبِ ذائقہ
    بیکنگ پاؤڈر: آدھا چائے کا چمچہ
    ہری مرچ : دو عدد درمیانے سائز کی (مرضی پر منحصر ہے اگر ڈالنا چاہیں تو باریک کاٹ لیں)
    ثابت دھنیہ : ایک مٹھی
    زیرہ : ایک کھانے کا چمچہ ( صاف کیا ہوا ،تمام اجزاء ملانے کے بعد ہلکا سا کوٹ کر سب سے آخر میں تلنے کے وقت ڈالیں۔)
    تیل : تلنے کے لیے

    ترکیب:
    بیسن میں تمام اجزاء کو ملالیں تلنے سے کچھ دیر پہلے ۔تیل کو ایک کڑاھی میں گرم کریں ۔جب تیل گرم ہو جائے درمیانے درجے پر تو اس میں بھجیئوں کے لیے تیار کیا بیٹر کٹا زیرہ ملا کر ڈالنا شروع کر دیں ۔ کچھ لوگ چمچہ بھی استعمال کرتے ہیں‌ پکوڑے بنانے کے لئے لیکن بہتر ہے کہ بھجیئوں کے لیئے نہ استعمال کریں‌۔براؤن ہونے تک الٹتے پلٹتے رہیں اور دونوں طرف سے تل جایئں تو بٹر پیپر پر نکال کر رکھ دی ۔

    نوٹ : کچھ خواتین کو میں نے دیکھا کہ وہ گھر میں سموسے یا پکوڑے بناتی ہیں اور جب کڑاھی سے نکالتی ہیں تو اسے اخبار پر پھیلا کر رکھ دیتی ہیں ۔ میرے خیال میں یہ صحیح‌نہیں‌ہے کیونکہ ایک تو اخبار بہت سارے ہاتھوں میں‌جاتا ہے اور دوسرے جو دوات اس میں‌چھپائی کے لیے استعمال ہوتی ہے مجھے معلوم نہیں‌ہے اس کے بارے میں‌کہ وہ مضر صحت ہے کہ نہیں ۔ اس لیے بہترہے کہ زائد تیل کے لیے یا تو کچن ٹاؤل ( ایک خاص قسم کے ٹشو پیپر جو کچن میں استعمال کے لیے تیار کیا جاتا ہے ) یا پھر بٹر پیپر استعمال کریں ۔

    اگلی ترکیب کے ساتھ ان شاءاللہ بہت جلد حاضر ہوں گی ۔
     
    Last edited by a moderator: ‏جون 25, 2008
  2. حیدرآبادی

    حیدرآبادی -: منفرد :-

    شمولیت:
    ‏جولائی 14, 2007
    پیغامات:
    1,319
    ہیں جی ۔۔۔۔ :00002:
    ھجری سال سے شعبان کا مہینہ کس نے ختم کر دیا اور کب سے ؟؟ :00038: :00013: :00039:
     
  3. ام اقصمہ

    ام اقصمہ -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 7, 2007
    پیغامات:
    3,893
    یہ حرکت میرے سوا اور کون کر سکتا ہے ۔ارے رمضان تو آئنگے ہی نہ ۔گزرے تھوڑی ہیں‌ابھی ۔:00005:
     
  4. ام اقصمہ

    ام اقصمہ -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 7, 2007
    پیغامات:
    3,893
    بھجیئوں کے بارے میں بھی تو کچھ بولیں ۔ویسے ہمارے ایک ملنے والے بھوپال سے ہیں اور وہ کبھی پکوڑے بولتے ہی نہیں‌ہیں ،ہمشہ بھجیئے ہی بولتے ہیں‌۔حیدرآباد میں‌کئے بولتے پکوڑوں‌کو۔:00013:
     
  5. ام اقصمہ

    ام اقصمہ -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 7, 2007
    پیغامات:
    3,893
    ایک تو یہ آپ کی اتنی بری عادت ہے کہ کچھ پوچھو تو ایسے غائب ہوتے ہیں جیسے ۔۔۔۔۔۔۔کے سر سے ۔۔۔۔۔۔۔۔:00038:
     
  6. ام اقصمہ

    ام اقصمہ -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 7, 2007
    پیغامات:
    3,893
    مونچیاں

    مونچیوں کو کچھ لوگ منگوچیاں بھی کہتے ہیں‌۔بہاریوں کے گھروں میں رمضان کی یہ فیورٹ ڈش ہوتی ہے ۔

    مونچیوں کے لیے اجزاء

    مونگ کی دال: آدھا پاؤ
    پیاز:ایک عدد چھوٹے سائز کی
    ہرا دھنیہ: تھوڑا سے چاپ کیا ہوا
    ہری مرچ:ایک عدد باریک کٹی ہوئی
    نمک ،مرچ: حسب ذائقہ
    زیرہ : ایک چائے کا چمچہ
    اجوائن : دو چٹکی
    بیکنگ پاؤڈر : آدھا چائے کا چمچہ ( اس صورت میں‌اگر جلدی بنانا ہو تو )
    تیل : تلنے کے لیے

    ترکیب:
    مونگ کی دال کو گرم پانی میں‌بھگو دیں ۔وہ جلد ہی بھیگ جائے گی ۔اچھی طرح سے بھیگی ہوئی دال کو ایک چھننی میں چھان لیں اور پھر اسے گرائینڈر میں‌ڈال کر پیس لیں‌۔اب اس میں‌پیاز ، ہری مرچ، ہرا دھنیہ، زیرہ ، اجوائن ملا کر رکھ دیں ۔اگر وقت کم ہو تو بیکنگ پاؤڈر شامل کریں اور اگر دوپہر سے پیس کر رکھا ہے تو ضرورت نہیں‌پڑے گی ۔

    کڑاہی میں گرم تیل میں ایک چمچے سے کڑاہی کے کناروں سے ڈالنا شروع کریں ۔جب دونوں جانب سے تل لیں تو نکال لیں ۔
     
  7. المسافر

    المسافر --- V . I . P ---

    شمولیت:
    ‏اپریل 10, 2007
    پیغامات:
    6,262
    بہت خوب دلکش بہن!

    ویسے بائی دا وے ایک بات تو بتائیں؟؟؟
    یہ آپ نے یکدم اتنا چونکا دینے والا دھاگہ کیوں لکھ دیا؟؟؟
    خیریت؟
     
  8. ڈان

    ڈان -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏ستمبر 28, 2007
    پیغامات:
    11,685
    واہ واہ ! بہت بہت بہت بہت بہت بہت بہت بہت بہت بہت بہت بہت بہت بہت بہت بہت بہت بہت
    خوب اور شکریہ دلکش سسٹر !
    بہت اچھا دھاگہ شروع کیا ہے ۔:00001:

    دراصل آپ بات کو سمجھا کریں ۔:00010:
    اگر نہیں سمجھے تو کوئی بات نہیں ، پھر کسی وقت میں سمجھا دونگا ۔ :00003:
     
  9. ام اقصمہ

    ام اقصمہ -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 7, 2007
    پیغامات:
    3,893
    شکریہ المسافر بھائی ۔

    بات یہ ہے کہ میں شاید مکمل طور پر اگلے ایک مہینے سے رمضان کے بعد تک غیر حاضر رہونگی۔ اس لیے میں‌نے سوچا کے جو کچھ بھی سوچ رکھا ہے اسے عملی جامہ پہنا دوں کیوں کہ صرف سوچ میں رکھنے کا فائدہ نہیں ہے اور رمضان کے بعد اگر ان لوازمات کی ترکیبیں لکھتی شاید پڑھنے والے اتنا فائدہ نہ اٹھا سکتے ۔ابھی دیکھیئے گا ان شاءاللہ اور مزے مزے کی ترکیبیں بھی شئیر کرونگی ۔بس دعاؤں میں‌یاد رکھیں ۔
     
  10. ام اقصمہ

    ام اقصمہ -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 7, 2007
    پیغامات:
    3,893
    شکریہ حسان بھائی ۔

    ہاں آپ ضرور سمجھانا وہ یاد ہے نہ سمجھ سمجھ کے سمجھ کے ،،،،،،،:00005:
     
Loading...

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں