دین اسلام

SZ Shaikh نے 'اسلامی متفرقات' میں ‏مئی 12, 2018 کو نیا موضوع شروع کیا

Tags:
  1. SZ Shaikh

    SZ Shaikh رکن اردو مجلس

    شمولیت:
    ‏مارچ 16, 2018
    پیغامات:
    53
    شَرَعَ لَکُمْ مِنَ الدِّیْنِ مَا وَصّٰی بِہ نُوْحًا وَّالَّذِیْ أوْحَیْنَا الَیْکَ وَمَا وَصَّیْنَا بِہ ابْرَاہِیْمَ وَمُوْسٰی وَعِیْسیٰ أنْ أقِیْمُوْا الدِّیْنَ وَلاَ تَتَفَرَّقُوْا فِیْہ․ (قرآن شوری: ۱۳)
    ترجمہ: "اللہ تعالی نے تمہارے لیے وہی دین مقرر کیا جس کا حکم نوح کو دیا گیا،اور جس کی وحی آپ صلی اللہ علیہ وسلم کو کی گئی،اور جس کا حکم موسی اور عیسی کو دیا کہ دین کو قائم کرو اور اس میں اختلاف برپا مت کرو۔"


    اسلام کے لغوی معنی اطاعت ، جھکنے ، سر ِ تسلیم خم کرنے اور مکمل سپردگی کے ہیں ۔ اس کے علاوہ اسلام ، امن سلامتی اور آشتی کے معنوں میں بھی استعمال ہوتا ہے۔ دین کا بنیادی تصور یہ ہے کہ اللہ تعالیٰ کی حاکمیت اور اقتدار اعلیٰ کو تسلیم کیا جائے۔ اور اسی نظام فکر و عمل کو اپنایا جائے۔ جزا اور سزا کا اختیار صرف اور صرف اللہ تعالی کی ذات کو حاصل ہے۔

    دراصل دین اسلام ایک مکمل ضابطہ حیات اور دستور زندگی ہے۔ زندگی گزارنے کا طریقہ کاجو آخری رسول محمد صلی اللہ علیہ وسلم سے پہلے بھی انبیاء کرام علیہم السلام کا تھا،اور بعد میں آنے والی تمام انسانیت کا رہے گا،اسی طریقہ کی تبلیغ و اشاعت کے لیے دنیا میں نبیوں کا طویل سلسلہ قائم کیا گیا۔ تا کہ اللہ تعالی کوحاکم مان کر اسی کے مطابق زندگی گزارے۔ اسی وجہ سے الله کے نزدیک پسندیدہ دین اسلام ہی ہے

    اِنَّ الدِّیْنَ عِنْدَ اللّٰہِ الْاسْلَام ۔ (آل عمران:۱۹)
    ترجمہ: اللہ کے نزدیک دین صرف اسلام ہے


    اکثر و بیشتر دین اور مذہب کو ایک دوسرے کے مترادف تصور کیا جاتا ہے، جبکہ مذہب چند رسومات پر مشتمل ہے ۔جو دین کا صرف ایک جز ہے۔ جو شرعی عبادات احکامات سے متعلق رہنمائی فراہم کرتا ہے۔ جبکہ دین، دنیا و آخرت کے تمام گوشوں پر محیط ہے. بلا شبہ دین خیر خواہی کا نام ہے۔ عقائد و عبادات، اخلاق و معاملات، معیشیت و معاشرت اور سیاست سب اس کے دائرے میں آتے ہیں۔ اور دین اسلام کامل مساوات کے اصول پر قائم ہے۔ اس لئے کہ اسکے احکامات اللہ تعالی کی حکمت کے اصولوں پر مبنی ہے۔

    جب مسلمان کلمہ لا اله الا الله کو اپنی زبان سے ادا کرتا ہے۔ عقیدے کے طور پر مانتا ہے۔تو اس کا یہ فرض بنتا کہ اسی کی مطابق اپنے شب وروز گزارے۔ دین اسلام پر پوری طرح عمل کیا جاے اس کو لے کر اٹھا جائے۔ اس کے احکام کو اپنی زندگی میں نافذ کرنے کی بھرپور جدوجہد کی جائے تاکہ زندگی کے تمام گوشہ میں صبغۃ الله کا رنگ آجائے۔ یہ اسی وقت ممکن ہو سکتاہے جب ہم دین اسلام میں پورے کے پورے داخل ہونگے ۔ فرمان الہی ہے :

    " یآَٰیُّھَا الَّذِیۡنَ اٰمَنُوا ادۡخُلُوۡا فِی السِّلۡمِ کَآفَّۃً ۔“ (البقرہ :۰ ۸ ۲)
    ترجمہ: ”اے وہ لوگو جو ایمان لائے ہو اسلام میں پورے کے پورے داخل ہو جاﺅ۔“


    بلا شبہ دین اسلام زندگی کی وہ شاہ کلید ہے کہ جو مسائل حیات کے جس قفل پر لگائی جائے وہ حل ہوتا چلا جائے گا۔مخالفت، رکاوٹیں اور نفس کی سرکشی تو آئیں گی۔ اس کےلئے اپنے آپ کو تیار کیا جائے۔ دین کی پیروی اس طرح کی جائے کہ شہادت علی الناس کا جیتا جاگتا نمونہ بن جائے۔

    وَ مَنْ اَحْسَنُ دِیْنًا مِّمَّنْ اَسْلَمَ وَجْھَہٗ لِلّٰہِ ، وَ ھُوَ مُحْسِنٌ ، وَّاتَّبَعَ مِلَّۃَ اِبْرَاہِیْمَ حَنِیْفًا.( النساء۴ : ۱۲۵)
    ’’اور اس سے بہتر دین کس شخص کا ہو سکتا ہے جو اپنے آپ کو اللہ کے حوالے کر دے، اس طرح کہ وہ ’’احسان‘‘ اختیار کرے اور ملت ابراہیم کی پیروی کرے جو بالکل یک سو تھا ۔‘‘

    تاکہ الله کے سامنے حجت پیش کر سکے کہ اے اللہ ہم تو ہمارے رسول صلی اللہ علیہ وسلم کے بتائے ہوئے طریقہ پر چلنے کی بھرپور کوشش کی اور اپنے نفس کو آمادہ اور تیار کرتے رہے۔ اور جو بن سکا کیا اس لئے کہ اپنے آپ کو کئی گمراہ کن راستے سے بچانا اوراس دین پر ثابت قدم رہنا بہت مشکل عمل ہے۔ یہ اسی وقت ممکن ہو گا جب ہمارا تعلق باللہ مضبوط ہوگا۔ آمین
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 2
    • مفید مفید x 1
    • تخلیقی تخلیقی x 1
  2. بابر تنویر

    بابر تنویر منتظم

    رکن انتظامیہ

    شمولیت:
    ‏دسمبر 20, 2010
    پیغامات:
    7,133
    جزاک اللہ خیرا سسٹر
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
    • حوصلہ افزا حوصلہ افزا x 1
  3. رفی

    رفی -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏اگست 8, 2007
    پیغامات:
    12,251
    جزاک اللہ خیرا سسٹر، بہت عمدہ تحریر!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
    • حوصلہ افزا حوصلہ افزا x 1
  4. SZ Shaikh

    SZ Shaikh رکن اردو مجلس

    شمولیت:
    ‏مارچ 16, 2018
    پیغامات:
    53
    جزاکم اللہ خیرا
     
  5. حافظ عبد الکریم

    حافظ عبد الکریم رکن اردو مجلس

    شمولیت:
    ‏ستمبر 12, 2016
    پیغامات:
    534
    جزاک اللہ خیرا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
    • حوصلہ افزا حوصلہ افزا x 1
Loading...

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں